اضافی فیسوں کے معاملے پر والدین انصاف کیلئے عدالت پہنچ گئے

waldeen court me  khi pkg 18-09 KHURRAM کراچی : تعلیم کے نام پر بھتہ لینے والوں کے سامنے جب حکومت ہوگئی بے بس تو والدین نے انصاف کیلئے عدالت کا دروزاہ کھٹکھٹا دیا، سندھ ہائیکورٹ نے چیف سیکریٹری، سیکریٹری تعلیم سمیت جنریشن اسکول کو فیسوں میں اضافے پر نوٹس جاری کردیا۔ حکومت نے تو سستی دکھائی، والدین کے بجائے تعلیم کے نام پر بھتہ لینے والوں ریلیف دیدیا، فیسوں میں اضافے کے معاملے نجی اسکول مالکان کو 10 فیصد اضافے کی اجازت دیکر نواز دیا، لیکن اضافی فیسوں کے بوجھ تلے دبے والدین کی حکومت نہ ایک نہ سنی، تو در بدر بھٹکے والدین نے عدالت سے انصاف کیلئے رجوع کرلیا۔ سندھ ہائیکورٹ میں جنریشن اسکول کیخلاف والدین نے درخواست دائر کردی، فیسوں میں اضافے پر جنریشن اسکول کو سندھ ہائیکورٹ نے نوٹس جاری کردیا، چیف سیکریٹری، سیکریٹری تعلیم، ڈائریکٹر پرائیوٹ اسکولز کو بھی نوٹس جاری کیا گیا ہے۔ عدالت نے جنریشن اسکول کو اضافی فیس ادا نہ کرنیوالے طلباء کیخلاف کارروائی سے روک دیا، درخواست گزاروں میں شارخ شکیل، فراز احمد اور ڈاکٹر شعیب شامل ہیں۔ درخواست گزار کا مؤقف ہے کہ سندھ پرائیوٹ ایجوکیشنل انسٹی ٹیوشنل آرڈیننس 2001ء اور 2005ء پر عمل درآمد کیا جائے، آرڈیننس کے تحت فیسوں میں سالانہ 5 فیصد سے زائد اضافہ نہیں کیا جاسکتا، اس اضافے کیلئے بھی محکمہ تعلیم کی منظوری ضروری ہے۔ درخواست میں مزید کہا گیا ہے کہ جنریشن اسکول نے فیسوں میں 14 سے 16 فیصد غیر قانونی اضافہ کیا، فیسوں میں اضافہ واپس لیکر جنریشن اسکول کیخلاف کارروائی کی جائے۔ سماء

nofeetilllowfee

School Fee Issue

Tabool ads will show in this div