جناح اسپتال میں پیرا میڈیکل اسٹاف کا دھرنا تیسرے روز بھی جاری

  [video width="640" height="360" mp4="http://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2015/09/3rd-day-protest-jinnah-pkg-NEW-16-09-khurram.mp4"][/video]   کراچی : جناح اسپتال اور این آئی سی ایچ کے پیرا میڈیکل اسٹاف کا دھرنا تیسرے روز بھی جاری ہے، ہیلتھ الاؤئنس کی فراہمی تک او پی ڈی سمیت تمام وارڈز کا بائیکاٹ کردیا، 3 روز میں 18 ہزار سے زائد مریضوں کو مایوس لوٹنا پڑا جبکہ 200 سے زائد آپریشن ملتوی ہوئے۔ مریضوں کی دہائیاں بھی دل موم نہ کرسکیں، پہلے مسیحاؤں نے مریضوں کو روندا اب پیرامیڈیکل اسٹاف مریضوں کو کچل رہا ہے۔ جناح اسپتال اور این آئی سی ایچ کے ڈاکٹروں کے بعد پیرامیڈیکل اسٹاف دھرنا دے کر بيٹھ گيا، ہیلتھ الاؤئنس کی فراہمی تک او پی ڈی سمیت تمام وارڈز میں کام سے انکار کردیا۔ جناح اسپتال اور بچوں کے اين آئی سی ایچ ميں زندگی سسکنے لگی، دور دراز سے آئے بيماروں کی آنکھوں ميں موت کے سائے لہرانے لگے، 3 روز میں 18 ہزار سے زائد بيمار گھروں کو مایوس لوٹ گئے، تو 200 سے زائد آپریشن بھی ملتوی ہوئے۔ خدا جانے کس کی زندگی کتنی ہے، ليکن موت کا ايک سبب اسپتالوں ميں ڈاکٹروں اور پيرا ميڈيکل اسٹاف کی ہڑتال بھی بن سکتی ہے۔ سماء

HEALTH

Tabool ads will show in this div