اٹھارویں ترمیم کے تحت حاصل اختیارات واپس نہیں کئے جائیں گے، وزیراعلیٰ بلوچستان

اسٹاف رپورٹ


کوئٹہ : وزیراعلیٰ بلوچستان کا کہنا ہے کہ اٹھارویں ترمیم کے تحت حاصل ہونے والے اختیارات کسی بھی صورت واپس نہیں دئیے جائیں گے اگر وفاق نے مداخلت کی تو صوبائی حکومت ڈٹ کر مقابلہ کرے گی۔


 کوئٹہ میں اٹھارویں ترمیم سے متعلق 2 روزہ تقریب میں خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ بلوچستان کا کہنا تھا کہ اٹھارویں ترمیم سے صوبوں کو جو اختیارات ملے وہ انتہائی اہم ہیں، اس کیلئے بلوچستان کی قوم پرست جماعتوں کو سنگین دھمکیوں کا سامنا بھی رہا اور قربانیاں بھی دی گئیں مگر صوبائی  قائدین اختیارات کیلئے ڈٹے رہے۔


انہوں نے کہا کہ  ترمیم کے حوالے سے سینیٹر رضا ربانی کا کردار قابل تعریف ہے اور وفاق نے بھی مثبت کردار ادا کیا تاہم فنڈر کے معاملے پر  یہ طے پایا تھا کی اگلے این ایف سی ایوارڈ تک محکموں کو وفاقی حکومت ہی فنڈز جاری کریے گی۔


ان کا کہنا ہے کہ بدقسمتی سے وفاق اب تعاون نہیں کررہی جس کے باعث مختلف محکموں میں فنڈز کی کمی پر شکایات موصول ہورہی ہیں۔


ڈاکٹر عبدالمالک کہتے ہیں کہ اختیارات تو حاصل کرلئے گئے ہیں اب ان پر عمل درآمد اور مؤثر اقدامات کا وقت ہے جس کیلئے افسر شاہی بھی تعاون کرے۔ سماء

کے

law

aid

eyes

بلوچستان

referee

promise

حاصل

taylor

Tabool ads will show in this div