جعلی ڈگری اور میڈیکل کالج کے پیچھے ڈاکٹر عاصم کا ہاتھ ہے، سائرہ افضل تارڑ

Nov 30, -0001

اسٹاف رپورٹ

اسلام آباد : صحت کی وزیر مملکت سائرہ افضل تارڈ نے پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل کی تباہی کا ذمہ دار ڈاکٹر عاصم حسین کو قرار دے دیا، کہتی ہیں ڈاکٹر عاصم کیخلاف ایکشن لینے میں پی ایم ڈی سی کا اپنا قانون رکاوٹ بنا ہوا تھا، تحقیقاتی اداروں سے تعاون کیلئے تیار ہیں۔

آصف زرداری کے قریبی ساتھی ڈاکٹر عاصم حسین گرفتار ہوئے تو صحت کی وزیر مملکت سائرہ افضل تارڈ کو پی ایم ڈی سی کی بربادی میں ان کا ہاتھ نظر آگیا، اسلام آباد میں نیوز کانفرنس میں بولیں کہ جعلی ڈگری اور میڈیکل کالج کے پیچھے ڈاکٹر عاصم کا ہاتھ تھا۔

وزیر مملکت نے پی ایم ڈی سی آرڈیننس پارلیمنٹ سے منظور کروانے اور 120 دن میں کونسل کے شفاف انتخابات کرانے کا عزم ظاہر کیا۔

سائرہ افضل تارڑ نے بتایا کہ ڈاکٹر عاصم کو نرسنگ کونسل کی صدارت سے بھی ہٹادیا گیا ہے، ستمبر کے تیسرے ہفتے تک پروفیشنل نرس کو ذمہ داری سونپ دیں گے۔ سماء

PMDC

ASIF ZARDARI

HEALTH

Saira Afzal Tararr

Tabool ads will show in this div