کراچی میں گزشتہ ماہ 20 سال سے زیادہ امن آیا، چوہدری نثار

ویب ایڈیٹر

اسلام آباد : وزیر داخلہ کہتے ہیں کراچی میں 20 برسوں میں اتنا امن نہیں آیا جتنا گزشتہ ايک ماہ ميں آيا، کسی سے انتقام نہیں لیا جارہا، پارلیمنٹ، فوج اور رینجرز کوئی ایم کیو ایم کیخلاف نہیں۔ چوہدری نثار بولے کہ انہیں احساس ہے متحدہ کو الطاف حسین کے بیانات پر کوئی اختیار نہیں مگر یہی وہ چنگاری ہے جس سے آگ بھڑک اٹھتی ہے، ایم کیو ایم قائد نے جو نقصان پہنچایا ہے اسے کنٹرول کرنے میں بہت وقت لگے گا۔

مزید پڑھیے ؛ فاروق ستار کا لاپتہ کارکنوں کے اعداد و شمار درست ہونے پر اصرار

قومی اسمبلی میں اپنے خطاب کے دوران وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کا یہ کہنا ہے کہ ایم کیو ایم کارکنوں کی گرفتاری اور گمشدگی کے جو بھی اعداد و شمار دیتی ہے وہ سراسر غلط ہیں، متحدہ کے علاوہ کراچی آپریشن پر تمام جماعتیں متفق ہیں، متحدہ قومی موومنٹ سے ہر معاملے پر بات چیت اور جائز مطالبات ماننے کیلئے تیار ہیں۔

وہ کہتے ہیں کہ ایم کیو ایم فوج اور رینجرز کے خلاف نہیں، اسی طرح حکومت، پارلیمنٹ، فوج اور رینجرز بھی ایم کیو ایم کیخلاف نہیں، کراچی میں متحدہ قومی موومنٹ کیخلاف آپریشن نہیں کیا جارہا، الطاف حسین کو اپنی تقریر میں طریقہ کار درست کرنا ہوگا، مسئلہ الطاف حسین کی تقریر کا ہے، انہوں نے معاملات کو بہت بگاڑ دیا ہے۔

چوہدری نثار نے یہ بھی کہا کہ نائن زیرو پر رینجرز کا جانے کا کوئی پروگرام نہیں تھا، رینجرز ملزمان کا پیچھا کرتے ہوئے نائن زیرو گئی، 20 سال میں کراچی میں اتنا امن نہیں آیا جتنا جولائی میں آیا، کسی کو لاپتہ کرنے کی پالیسی حکومت کی نہیں۔ سماء

AltafHussain

NATIONAL ASSEMBLY

Chohadry Nisar

Tabool ads will show in this div