فاروق ستار کا لاپتہ کارکنوں کے اعداد و شمار درست ہونے پر اصرار

اسٹاف رپورٹ

اسلام آباد : ڈاکٹر فاروق ستار نے چوہدری نثار کی ایوان میں تقریر کا جواب میڈیا پر دیا، ایم کیو ایم رہنماء کا کہنا تھا کہ الطاف حسين کی تقريريں تو اب شروع ہوئی ہیں، آپريشن 2 سال سے چل رہا ہے، وزیر داخلہ 150 لاپتہ کارکنوں کا پتہ چلائيں۔

ڈاکٹر فاروق ستار نے چوہدری نثار پر جوابی وار کیا، متحدہ کے لاپتہ کارکنوں کے اعداد و شمار درست ہونے پر اصرار اور کراچی کی صورتحال پر اسمبلی کے اندر بحث نہ ہونے پر پارلیمنٹ کے باہر احتجاج بھی کیا، اسپیکر کو حکومت کے ہاتھوں یرغمال قرار دے ڈالا۔

مزید پڑھیے ؛ کراچی میں گزشتہ ماہ 20 سال سے زیادہ امن آیا، چوہدری نثار

ایم کیو ایم کے پارلیمانی لیڈر نے رینجرزم، پولیس، عدلیہ سمیت کسی کو نہیں بخشا، سینیٹ، اسمبلیوں سے بھی بات نہ سننے کا شکوہ کر ڈالا، فاروق ستار نے کراچی میں امن کو گینگسٹرز کے بیرون ملک فرار کا نتیجہ قرار دیا، الطاف حسین کی تقریر کے معاملے کا آئینی حل ڈھونڈنے کا مطالبہ بھی کر دیا۔

مزید پڑھیے ؛ بلوچستان اسمبلی کی الطاف حسین کیخلاف آرٹیکل 6 کے تحت کارروائی کا مطالبہ

ڈاکٹر فاروق ستار نے اعتراف کیا کہ کراچی میں آپریشن ایم کیو ایم کے مطالبے پر شروع کیا گیا تاہم ان کا کہنا تھا کہ وزیر داخلہ چوہدری نثار نے کسی پارٹی کو نشانہ نہ بنانے کا یقین دلایا مگر ایسا نہیں ہوا۔ سماء

AltafHussain

NATIONAL ASSEMBLY

FAROOQ SATTAR

Chohadry Nisar

Tabool ads will show in this div