حریت رہنماؤں سےملاقات پربھارتی ڈکٹیشن قبول نہیں،پرویزرشید

ویب ایڈیٹر :


اسلام آباد : وفاقی وزیر اطلاعات پرویز رشید کا کہنا ہے کہ پاک بھارت مذاکرات کی گیند بھارتی کورٹ میں ہے، بھارت مذاکرات سے انکار کے بہانے تراش رہا ہے، پاکستان کی جانب سے مذاکرات کیلئے کوئی شرط یا پابندی عائد نہیں کی، حریت رہنماؤں سے ملاقات اٹل فیصلہ ہے،بھارتی ڈکٹیشن قبول نہیں۔

مزید پڑھیں : پاکستان نے بھارتی من مانیاں مسترد کردیں

اسلام آباد میں میڈیا سے گفت گو میں وفاقی وزیر اطلاعات پرویز رشید کا کہنا تھا کہ مذاکرات کی گیند بھارت کے ہاتھ میں ہے، بھارت مذاکرات سے انکار کے بہانے بنا رہا ہے، بھارت انسانی حقوق کی خلاف ورزی کر رہا ہے، دنیا کہہ رہی ہے کہ بھارت نے کشمیریوں کے حقوق سلب کیے ہیں۔

پرویز رشید کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان مذاکرت کیلئے تیار ہے، پاکستان نے مذاکرات کیلئے کوئی شرط عائد نہیں کی، حریت رہنماؤں سے ملاقات کیلئے بھارت کی پابندیاں اور شرائط کسی طور قبول نہیں کریں گے۔

دہشت گردوں کے خلاف جاری آپریشن ضرب عضب سے متعلق وفاقی وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ دہشت گردوں کی کمر توڑ کر ان کی کمین گاہیں ختم کر دی ہیں، ضرب عضب میں نمایاں کامیابیاں حاصل کیں، زخمی ایم کیو ایم رہنما رشید گوڈیل سے متعلق پوچھے گئے سوالات کے جواب میں پرویز رشید ان کیلئے نیک تمناؤں کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اللہ رشید گوڈیل کو صحت و تندرستی دے، ہر پاکستانی کی طرح ہمیں ایم کیو ایم رہنماؤں کی زندگی بھی عزیز ہے، پرانے واقعات کا ذکر کرتے ہوئے پرویز رشید نے کہا کہ میں اکثر رشید گوڈیل سے چھالیہ مانگ کر کھاتا ہوں، کراچی جا کر ان سے چھالیہ لے کر کھاؤں گا۔

استعفوں کے معاملے پر وزیر اطلاعات نے کہا کہ ایم کیو ایم کے خلاف کوئی کارروائی نہیں ہو رہی، کراچی آپریشن صرف جرائم کے خلاف ہے، ایم کیو ایم سے استعفے واپس لینے کیلئے درخواست کی ہے، چاہتے ہیں اسمبلیوں میں ایم کیو ایم کی بات سنیں، اختلاف رائے رکھنے والوں کو اسمبلیوں میں دیکھنا چاہتے ہیں، کراچی کے لوگوں نے ایم کیو ایم کو منتخب کیا ہے۔ سماء

INFORMATION MINISTER

ZARBEAZB

FOREIGN OFFICE

MEETING

PERVAIZ RASHEED

Huriyat Leaders

Tabool ads will show in this div