مسئلہ کشمیر کو یورپی یونین،امریکی کانگریس میں اٹھایا جائیگا

عشروں بعد یورپی،امریکی ایوانوں میں مسئلہ کشمیراٹھایاجائیگا

یورپی یونین اور امریکی کانگریس کی کمیٹی برائے خارجہ امور نے مسئلہ کشمیر پر بات چیت کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

غیر ملکی ذرائع ابلاغ سے جاری خبروں کے مطابق امریکی کانگریس کی کمیٹی برائے خارجہ امور کی تاریخ میں پہلی بار مسئلہ کشمیر اٹھایا جائے گا، جہاں امریکی کانگریس کی ایشیا سب کمیٹی مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کی سماعت کریگی۔

امریکی رکن کانگرس کے رکن اور کمیٹی کے ڈیموکریٹ چیئرمین براڈ شرمین کا کہنا ہے کہ گذشتہ ہفتے امریکی نژاد کشمیریوں سے لاک ڈاؤن سے متعلق حالات سنے، امریکن کشمیری اپنے پیاروں کے بارے میں سخت فکرمند ہیں، مقبوضہ وادی میں انسانی حقوق سے متعلق مزید جاننے کا منتظر ہوں۔

انہوں نے کہا کہ وادی میں مواصلاتی ذرائع مکمل طور پر بند ہونے سے لوگوں کو اپنے پیاروں کی خیریت دریافت کرنے میں دشواری کا سامنا ہے، بھارت کی جانب سے ایسے اقدامات انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہیں۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ بریڈ شرمین نے ساتھی رکن کانگریس آندرے کارسن کے ساتھ مل کر وادی سے تعلق رکھنے والے امریکیوں سے ملاقات کی تھی۔ جس میں کشمیریوں نے انہیں مقبوضہ وادی میں اپنے عزیزوں کے حوالے سے درپیش خطرات سے آگاہ کیا تھا۔

واضح رہے کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل مسئلہ کشمیر کے بارے میں 16اگست کو اجلاس بلا چکی ہے۔ اجلاس میں اس بات کا اعتراف کیا گیا کہ مسئلہ کشمیر عالمی سطح پر حیثیت اختیار کر گیا ہے۔

دوسری جانب یورپی ممالک کی بڑی تنظیم یورپی یونین نے بھی مسئلہ کشمیر پر اجلاس بلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ یورپی پارلیمنٹ کا اجلاس دو اگست بروز پیر کو مسئلہ کشمیر پر طلب کیا گیا ہے، جہاں یورپین ایکسٹرنل ایکشن کمیٹی مقبوضہ وادی میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر رپورٹ پیش کی جائے گی۔

EUROPEAN UNION

US CONGRESS

Tabool ads will show in this div