خیبر پختون خوا میں بنوں پولیو وائرس کا گڑھ بن گیا

خیبر پختون خوا میں بنوں پولیو وائرس کا گڑھ بن چکا ہے۔

بنوں شہر میں ہائي رسک ہونے کے باوجود والدين پوليو سے بچاؤ کے قطرے پلانے سے انکار کرتے ہیں۔ خيبر پختونخوا کے اس شہر میں سے 21 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ ملک بھر میں پولیو کے کیسز کی تعداد 53 تک ہوگئی ہے۔

انسداد پولیو ٹیم کی رپورٹ میں بتایا گیا ہےکہ بنوں ميں 20 ہزار کے قريب والدين نے پوليو سے بچاؤ کے قطرے پلانے سے انکار کیا ہے۔

ماہرين کے مطابق پوليو ميں اضافے کي وجہ والدين کا بچوں کو پوليو سے بچاؤ کے قطرے پلانے سے انکار ہے۔ پاکستان سے بيرون ملک جانے والوں کے لئے بھي پوليو سے بچاؤ کے قطرے لازمي قرار دے ديئے گئے ہيں۔

عالمي اداروں کي کوششوں سے دنيا پوليو کے وائرس سے پاک ہوچکي ہے مگر پاکستان، افغانستان اور نائجيريا ميں اب بھي يہ وائرس موجود ہے۔

KP health

Tabool ads will show in this div