لاہور میں سيلز گرل پر تشدد، ملزمہ ضمانت پر رہا

لاہور میں شاپنگ مال میں آئینہ نہ دینے پر سيلز گرل پر تشدد کرنے والي خاتون صدف کو ضمانت پر رہا کرديا گيا ہے۔

گزشتہ روز سے سوشل میڈیا پر ایک ویڈٰیو وائرل ہورہی تھی جس میں ایک خاتون کو دیکھا جاسکتا ہے جو ایک لڑکی کو بالوں سے پکڑ کر فرش پر گھسیٹ رہی ہے جبکہ ارد گرد لوگوں کا ہجوم لگا ہوا ہے مگر کوئی اس لڑکی کی مدد کو نہیں آرہا۔

ایس ایس پی آپریشنز لاہور کے مطابق خاتون نے شاپنگ مال کے اندر میک اپ شاپ پر سیلز گرل سے آئینہ مانگا تھا، سیلز گرل نے انہیں بتایا کہ آئینہ موجود نہیں ہے جس پر خاتون نے طیش میں آکر اسے بالوں سے پکڑ کر گھسیٹتے ہوئے باہر لے آئی اور وہاں اس پر تشدد کیا ۔

لاہور پولیس نے ویڈیو کا نوٹس لیتے ہوئے واقعہ کی تحقیقات شروع کی اور عید کے دوسرے روز خاتون کا سراغ لگاکر اسے گرفتار کرلیا۔

بدھ کے روز خاتون کو ماڈل ٹاون کچہري ميں جوڈيشل ميجسٹريٹ کے سامنے پيش کيا گيا جس نے صدف کو ضمانت پر رہا کرنے کا حکم ديا۔ واقعے کا مقدمہ شاپنگ مال انتظاميہ کي مدعيت ميں درج کيا گيا تھا ۔

shopping mall

Tabool ads will show in this div