بجٹ میں کٹوتی،کئی جامعات کا مستقبل داؤ پر لگ گیا،وائس چانسلرز کمیٹی کا انتباہ

وائس چانسلرز کمیٹی نے بجٹ میں کٹوتی کے باعث کئی جامعات کا مستقبل داؤ پر لگنے کا انتباہ جاری کردیا ہے۔ کمیٹی چیئرمین ڈاکٹر محمد علی نے کہا ہے کہ بحران سے بچنے کیلئے سپلیمنٹری گرانٹ مانگنے کےعلاوہ کوئی چارہ نہیں رہا۔

ملک بھر کی سرکاری جامعات شدید مالی مشکلات سے دوچار ہیں۔اس صورتحال پرغور کرنے سرابراہان اسلام آباد میں سرجوڑ کر بیٹھک گئے۔

وائس چانسلرز کمیٹی کا کہنا ہے کہ ہائرایجوکیشن کے بجٹ میں 9 فیصد کٹوتی نےادارے چلانا محال کردیا۔ انھوں نے حکومت سے فوری سپلیمنٹری گرانٹ دینے کا مطالبہ کیا۔کمیٹی چئیرمین ڈاکٹر محمد علی نے بتایا کہ پشاور یونیورسٹی سمیت کئی دوسری جامعات بند ہونے کے قریب ہیں۔

کمیٹی نے مطلوبہ فنڈز نہ ملنے پر تعلیمی معیار داؤ پر لگنے کا بھی انتباہ کیا اور کہا کہ اس صورتحال میں سروسز سمیت تحقیقات،تعلیمی معیار پر سمجھوتہ کرنا پڑے گا۔

وائس چانسلرز کمیٹی کے مطابق ہائر ایجوکیشن کی مد میں ضرورت 82 ارب روپے کی ہے لیکن صرف 59 ارب روپے دئیے گئے ہیں جو کسی بھی صورت کافی نہیں ہیں۔

education system in pakistan

Tabool ads will show in this div