کشميری ہمارے ہيں، کشمير بھی ہمارا ہے، مراد سعید

پی ٹی آئی کے رہنما اور وفاقی وزیر مراد سعید نے کہا ہے کہ پاکستان کے ہر گھر ميں کشميريوں کيلئے دعائيں ہوتي ہيں، کشميري ہمارے ہيں، کشمير بھي ہمارا ہے۔

بدھ کو پارلیمنٹ کے مشترکہ سیشن سے خطاب کرتے ہوئے مراد سعيد نے کہا کہ جنگ نظريے، سوچ اور بيانيے کي ہے،عمران خان نے کل جو بيانيہ ديا وہ تمام عالمي ميڈيا تک پہنچا۔

مراد سعيد نے وضاحت دی کہ پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس وزيراعظم عمران خان کي وجہ سے تاخيرکا شکار نہيں ہوا، اپوزيشن کے ارکان پروڈکشن آرڈرز مانگ رہے تھے اس لئے تاخیر ہوئی۔

پاکستان کی سفارت کاری کے لیے کشمیر بڑا امتحان ہے،ارکانِ پارلیمنٹ کی رائے

انھوں نے تنقید کی کہ اپوزيشن کو بوکھلاہٹ وزيراعظم کے امن پيغام دينے پر ہے، کشميريوں کي امنگوں کے مطابق مسئلے کا فيصلہ ہوگا، برہان واني کي شہادت نے کشميريوں ميں نئي روح پھونکي۔

اراکین پارلیمنٹ کا مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت ختم کرنے پر تبصرہ

مراد سعید نے مزید کہا کہ بھارت نے چين کي خود مختاري پر بھي حملہ کيا، عمران خان کے آنے کے بعد کشمير کاز زندہ ہوا، ہم نے کشمير کا مقدمہ لڑنا ہے، مسئلہ کشمير کے حل کا آغاز ہوگيا ہے۔

مقبوضہ کشمیر میں ہونے والے بھارتی مظالم پر خاموش نہیں رہ سکتے،عمران خان

اس موقع پر ان کی راجا پرویز اشرف سے تلخ کلامی بھی ہوئی۔ راجا پرويز اشرف نے کہا کہ کشمير پر بات ہورہي ہے، يہ پوائنٹ اسکورنگ پر آگئے۔ راجا پرويز نے سوال کیا کہ کيا آپ قومي يکجہتي کو پارہ پارہ کرنا چاہتے ہيں، ہمارا 40 سال کے سیاسی تجربہ ہے۔

بھارتی وزیراعظم نريندر مودی نے امن کے تمام راستے بند کردئيے،شیخ رشید

اس پر مراد سعيد نے جواب دیا کہ آپ کا 40 سال کا تجربہ ہے، اللہ مجھے اس سے محفوظ ہي رکھے، ميں تبديلي کيلئے آيا ہوں، آپ کے 40 سال جيسا حال نہيں چاہتا۔

Joint session

Tabool ads will show in this div