بھارت کے ساتھ اگر جنگ ہوئی تو ساری دنیا اس کی حدت محسوس کرے گی،فواد چوہدری

وفاقی وزیر فواد چوہدری نے کہا ہے کہ ہميں بھارت سے سفارتي تعلقات  منقطع کرنے چاہئيں، کشمير کو فلسطين نہيں بننے دينا،اگر جنگ ہوئي تو ساري دنيا اس کي حدت محسوس کرے گي۔

بدھ کو پارلیمنٹ کے مشترکہ سیشن سے خطاب کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ کل وزيراعظم نے سوال کيا کہ کيا حملے کا اعلان کردوں۔ اس موقع پر بلاول بھٹو کو کھڑے ہو کر کہنا چاہيے تھا کہ قدم بڑھاؤ ہم تمہارے ساتھ ہيں۔

فواد چوہدری نے واضح کیا کہ پاکستان لڑنا نہيں چاہتا مگر ايسا تاثر نہيں جانا چاہيے، لڑنے کا موقع آيا تو اس قوم کا بچہ بچہ لڑے گا۔

مسئلہ کشمیر پر اگرعالمی عدالتِ انصاف ميں جانا ہے تو سوچ بچار کرکے جائيں،راجہ ظفرالحق

انھوں نے کہا کہ جب کوئي بات نہيں کرني تو بھارتي سفير يہاں کيا کررہے ہيں، ہميں بھارت سے سفارتي تعلقات منقطع کرنے چاہئيں، کشمير کو فلسطين نہيں بننے دينا، اگر جنگ ہوئي تو ساري دنيا اس کي حدت محسوس کرے گي۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ کشمير کيلئے پہلے بھي تين جنگيں لڑچکے ہيں،ہميں جنگ اور امن، دونوں کيلئے تيار رہنا چاہيے،اس سلسلے میں عالمي برادري اپني ذمہ داري پوري کرے۔

بھارت کا اگلا قبضہ آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان ہوگا،سراج الحق

فواد چوہدری نے مزید کہا کہ پارليمنٹ ميں گپ شپ ہي چلتي رہي ہے،اپني سياست کے پيچھے ہمارے بچوں کي لاشوں کي بے حرمتي نہ کريں۔

kashmir issue

Joint session

Parliament session

Tabool ads will show in this div