دوبارہ پولنگ کرائیں ورنہ پولیو مہم کا بائیکاٹ کریں گے، ناکام امیدواروں کا انتباہ

 

خیبر پختونخوا کے قبائلی ضلع شمالی وزیرستان میں پی کے 111 سے ناکام ہونے والے تمام امیدواروں نے مطالبہ کیا ہے کہ حلقے میں دوبارہ پولنگ کرائی جائے ورنہ پولیو مہم کا بائیکاٹ کیا جائے گا۔

گزشتہ روز ہونے والے انتخابات میں پی کے 11 سے تحریک انصاف کے امیدوار 10 ہزار 200 ووٹ لیکر کامیاب جبکہ جمعیت علمائے اسلام کے امیدوار سمیع الدین نے 9 ہزار 288 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

پیر کو جمعیت علمائے اسلام کے امیدوار کے امیدوار سمیع الدین سمیت آزاد امیدواروں جمال عبدالناصر، جہانزیب ایڈووکیٹ، انعام جان، اسد اللہ اور انجینئر شفقت داوڑ پریس کلب بنوں میں مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے الیکشن نتائج کو مسترد کردیا اور حلقے میں دوبارہ پولنگ کا مطالبہ کیا۔ اس حلقے سے مسلم لیگ ن کے امیدوار نے پولنگ کے دوران ہی ہنگامی پریس کانفرنس کرتے ہوئے تحریک انصاف پر دھاندلی کے الزامات عائد کیے تھے۔

امیدواروں نے الزام عائد کیا کہ شیوہ کے 5 پولنگ اسٹیشنوں میں بندوق کے زور پر دھاندلی اور دہشت گردی کی گئی اور مداخلت کرنے پر جے یو آئی کے امیدوار سمیع الدین کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔

انہوں نے مطالبہ کیا پی کے 111 کے مذکورہ پولنگ اسٹیشنز میں کاسٹ ہونے والے ووٹوں کی بائیو میٹرک تصدیق کی جائے یا حلقہ میں دوبارہ انتخابات کرائے جائیں۔ الیکشن کمیشن اور دیگر اداروں نے تحفظات دور نہ کیے تو پولیو مہم کا بائیکاٹ کیا جائے گا۔

امیدواروں نے کہا کہ اگر سلیکٹیڈ وزیراعظم نے شمالی وزیر ستان کے عوام کو سلیکٹیڈ ایم پی اے دینا تھا تو الیکشن کا ڈرامہ کیوں رچایا گیا۔

ELECTION

Politics

Tabool ads will show in this div