بلوچستان کا 419 ارب روپے کا بجٹ پیش

بلوچستان کا مالی سال 20-2019ء کیلئے  419 ارب روپے سے زائد کا بجٹ پیش کردیا گیا، بجٹ تقریر کے دوران اپوزیشن نے ایوان میں شدید ہنگامہ آرائی کی اور بجٹ تقریر کی کاپیاں پھاڑ دیں، ایوان سے بائیکاٹ بھی کیا۔

بلوچستان حکومت  کا پہلا مالی بجٹ صوبائی وزیر خزانہ ظہور بلیدی نے پیش کیا، 419 ارب روپے کے بجٹ میں 48 ارب روپے کا خسارہ ظاہر کیا گیا ہے۔

بجٹ کے مطابق ترقیاتی منصوبوں پر 126 ارب روپے خرچ کئے جائیں گے، کوئٹہ میں کینسر اسپتال، بلوچستان میں 4 یونیورسٹیاں اور 14 نئے کالجز کی تعمیر کا اعلان بھی کیا گیا۔

بجٹ تقریر کے دوران اپوزیشن نے ایوان میں شدید ہنگامہ آرائی کی اور بجٹ تقریر کی کاپیاں پھاڑ دیں، ایوان مچھلی بازار بن گیا۔

بلوچستان کے بجٹ میں تعلیم کیلئے 60 ارب، صحت کیلئے 30 اور امن و امان کیلئے 44 ارب روپے مختص کئے گئے ہیں، 5500 نئی آسامیاں اور سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 10 فیصد اضافے کا اعلان بھی کیا گیا ہے۔

PTI

BAP

Tabool ads will show in this div