تازہ ترین

تمام اپوزیشن جماعتیں آج بلاول بھٹو کے افطارپراکٹھی ہوں گی

کل کے سیاسی دشمن حکومت کے خلاف حکمت عملی طے کرنے کیلئے آج کے دوست بن گئے۔ اپوزیشن جماعتیں آج بلاول بھٹو زرداری کی جانب سے دیے جانے والے افطار پر اکٹھی ہو رہی ہیں۔

حکومت مخالف تحریک کی تیاریاں تیزکردی گئیں، ملک کی موجودہ معاشی صورتحال اور اس حوالے سے لائحہ عمل طے کرنے کیلئے چیئرمن پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے تمام اپوزیشن جماعتوں کو افطار کی دعوت دے ڈالی جس میں مریم نواز بھی شریک ہوں گی۔

بلاول بھٹو نے خود فون کرکے مریم نواز کو مدعو کیا جبکہ اس کے علاوہ جماعت اسلامی، جے یو آئی اورپشتونخوا ملی عوامی پارٹی کو بھی بلاوا دیا گیا جس پر تمام اپوزیشن جماعتوں نے شرکت کی حامی بھری ہے۔

ن لیگ کی نائب صدر مریم نواز پیپلز پارٹی کے افطار ڈنر میں شرکت کیلئے اتوار کو دوپہر2 بجے لاہور سے اسلام آباد پہنچیں گی جہاں وہ افطار سے پہلے اپنے داماد راحیل منیر کے گھر قیام کریں گی۔

مریم نواز کے علاوہ ن لیگ کی جانب سے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی، خواجہ آصف اور مریم اورنگزیب بھی پیپلز پارٹی کی افطار پارٹی میں شرکت کریں گی۔

بلاول بھٹو زرداری نے سربراہ جمعیت علمائے اسلام مولانا فضل الرحمن اور سربراہ عوامی نیشنل پارٹی اسفند یار ولی سے بھی خود رابطہ کیا ۔ اس کے علاوہ سربراہ پشتونخوا ملی عوامی پارٹی محمود خان اچکزئی، سربراہ بلوچستان نیشنل پارٹی اخترمینگل، امیر جماعت اسلامی سراج الحق ، سربراہ قومی وطن پارٹی آفتاب شیرپاؤ اورسربراہ جمیعت علمائے پاکستان اویس نورانی کو بھی زرداری ہاؤس کے افطار ڈنر میں شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔

یاد رہے کہ ملک میں مہنگائی کی لہر اور حکومت کی جانب سے آئی ایم ایف سے قرض کے معاہدے پر اپوزیشن نے حکومت کو ٹف ٹائم دینے کا فیصلہ کیا تھا، جمعے کو سابق صدر آصف زرداری اور سربراہ جے یو آئی (ف) مولانا فضل الرحمان کی ملاقات میں بھی اس حوالے سے اتفاق کیا گیا تھا۔

iftar dinner

bilawal bhutto zardari

MARYAM NAWAZ

opposition alliance

Tabool ads will show in this div