رمضان،عید، محرم کے چاند دیکھنے کیلئے حکومت نے کمیٹی بنا دی

وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی چوہدری فواد حسین نے رمضان المبارک، عید الفطر، عید الاضحیٰ اور محرم الرام کے چاند دیکھنے کیلئے کمیٹی قائم کر دی۔

وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کی جانب سے جاری بیان کے مطابق کمیٹی رمضان، عیدالفطر، عیدالاضحیٰ اور محرم الحرام کے حوالے سے کیلنڈر تشکیل دے گی۔ کمیٹی میں اسپارکو کے نمائندے کو بھی نمائندگی دی گئی ہے۔

پاکستان میں رمضان: ایک ملک اور دو چاند

کمیٹی کے دیگر اراکین میں جوائنٹ سائنٹفک ایڈوائزر اور محکمہ موسمیات کے ماہر شامل ہیں۔ کمیٹی چاند دیکھنے سے متعلق 5 سالہ کیلنڈر کو حتمی شکل دے گی۔ وزارت سائنس کی جانب سے کمیٹی کی تشکیل کا نوٹی فکیشن جاری کردیا گیا ہے۔ کمیٹی وفاقی وزیر فواد حسین کے حکم پر تشکیل دی گئی ہے۔

 

واضح رہے اس سے قبل اتوار کو وفاقی وزیر کے رویت ہلال کمیٹی سے متعلق بیان نے ملک میں نئی بحث کا آغاز کیا تھا۔ اپنے متنازعہ بیان میں فواد حسین کا کہنا تھا کہ دس سال کا کلینڈر بنانے کیلئے کمیٹی بنا دی ہے، جو چاند اور عید سمیت اہم تاریخوں سے متعلق فیصلہ کرے گی، کمیٹی بنانے سے ہر سال پیدا ہونے والا تنازعہ ختم ہوجائے گا۔

 

فواد چوہدری کا مزید کہنا تھا کہ علماء کا احترام ہے لیکن پوری دینا میں ایسے معاملات رضا کارانہ بنیادوں پر ہوتے ہیں، پیسے لے کر نہیں، چاند کی دید اور رویت ہلال کمیٹی سے متعلق میں نے رائے دی ہے، تاہم ہر کسی کا میری بات سے متفق ہونا ضروری نہیں، عید اور رمضان کے چاند پر 36 سے 40 لاکھ خرچ کرنا کہاں کی عقل مندی ہے، چاند دیکھنے کیلئے کم ازکم معاوضہ نہیں ہونا چاہیے۔

 

فواد چوہدری کے بیان پر رویت ہلال کمیٹی کے سربراہ مفتی منیب الرحمان کا اسے لاعلمی قرار دیتے ہوئے اپنے ردعمل میں کہا کہ انہیں معلوم ہونا چاہیے اجلاس محکمہ موسمیات میں ہی ہوتا ہے، کبھی بھی ایسا نہیں ہوتا کہ کھلے آسمان میں چاند نظر نہ آتا ہو۔

 

مفتی منیب الرحمان نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان سے اپیل کی تھی کہ دین کے معاملات پر جو متعلقہ وزیر ہیں، وہ بات کریں، ہر وزیر دین کی حساسیت کو نہیں سمجھتا۔ لہٰذا انہیں دینی معاملات پر تبصرہ کرنے کا فری لائسنس نہیں ملنا چاہیے۔

RAMZAN

MOON SIGHTING

Mufti Muneeb

science and technology

Tabool ads will show in this div