پاکستان میں سالانہ ایک لاکھ 62 ہزار افراد تمباکو نوشی کے باعث انتقال کرجاتے ہیں

May 02, 2019
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2018/05/Under-Age-Smoking-Pkg-02-05.mp4"][/video]

وفاقی وزارت صحت کے اعداد و شمار میں بتایا گیاہے کہ پاکستان ميں بڑوں کے علاوہ بچے بھي سگريٹ نوشی کررہے ہیں۔

وفاقي وزارت صحت کے صوبائي چيف سيکريٹريز کو لکھے گئے مراسلے میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان ميں روزانہ پانچ سے پندرہ سال کے 1200 بچے سگريٹ نوشي کي طرف آتے ہيں، ملک ميں دو کروڑ چاليس لاکھ بچے سگريٹ نوشي کا شکار ہيں، پاکستان میں سالانہ ايک لاکھ  62  ہزار افراد سگريٹ نوشی سے جان گنوا ديتے ہيں۔

یہ مراسلہ معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا کی ہدایت پر جاری کیا گیا اور اس میں مزید یہ بھی بتایا گیا کہ تمباکو نوشی قوانین اور مصنوعات کی تشہیر کی گائیڈ لائن پر عمل یقینی بنایا جائے، تمباکو مصنوعات کے تحائف پیکٹ خریدنے پر رقم واپس کی تشہیر قانون کی خلاف ورزی ہے، تمباکو مصنوعات کو پرنٹ، الیکٹرانک، بل بورڈ اور دیگر ذرائع سے مشتہر نہیں کیا جاتا۔

Smoking kills

Tabool ads will show in this div