کراچی میں تجاوزات کا خاتمہ خواب بن گیا ، حتمی نوٹسز کے باوجود پولیس چوکیاں برقرار

Apr 24, 2019

شہر سے تجاوزات کا خاتمہ خواب بن گیا فٹ پاتھوں پر تجاوزات مافیا اور پولیس کا قبضہ تاحال برقرار ہے ۔

بلدیہ عظمی کراچی کی جانب سے شہر بھر تجاوزات کے خاتمے کا مشن جاری ہے تاہم شہر کے فٹ پاتھوں پر قائم پولیس چوکیاں تاحال برقرار ہے، سندھ پولیس کو مہلت پر مہلت دینے پر بھی غیرقانونی چوکیاں خالی تک نہیں کی گئی ،سندھ پولیس نے عدالتی احکامات اور کے ایم سی نوٹسز نظر انداز کردئیے۔ پی آئی ڈی سی اور زینب مارکیٹ پر ٹریفک چوکیاں تاحال قائم ہیں ،آئی آئی چندریگر روڈ پولیس چوکی بھی ختم نہیں کی جاسکی ۔

کے ایم سی نے تیرہ مارچ کو حتمی نوٹسز جاری کرکے 7 روز کی مہلت دی تھی، حتمی نوٹس کو ایک ماہ گزر گیا، چوکیاں مسمار نہیں کی گئی۔

قبضہ مافیا نے پشاور کی تاریخی دیوار کا بڑا حصہ گرادیا، مقدمہ درج

کے ایم سی نے 21 اور 25 جنوری کو پہلی مرتبہ نوٹسز جاری کرکے تین روز کہ مہلت دی تھی جبکہ سندھ پولیس کے عدم تعاون پر انسداد تجاوزات کا چوکیوں کے خلاف کاروائی کا امکان ہے۔

ڈائریکٹر لینڈ اینٹی انکروچمنٹ غیرقانونی چوکیاں ختم کرنے کیلئے اعلی پولیس افسران کو مراسلہ بھی ارسال کیا گیا، اعلی پولیس افسران نے ازخود چوکیاں ختم کرنے کا عندیہ دیا تھا۔

 

POLICE STATION

ENCROACHMENT