Technology

واٹس ایپ کے اینڈرائڈ صارفین اب اسکرین شاٹ نہیں لے سکیں گے

[caption id="attachment_1524497" align="alignnone" width="800"] تصویر: گیجٹ 360[/caption]

واٹس اپ کے بیٹا ورژن میں ایک نئی تبدیلی آنے والی ہے جس کے بعد اینڈرائڈ فون استعمال کرنے والے اسکرین شاٹ لینے کی سہولت سے محروم ہوجائیں گے۔

معروف سوشل ایپ کا بیٹا ورژن استعمال کرنے والوں کیلئے واٹس ایپ ڈوڈل کے ذریعے نیا انٹر فیس متعارف کرایا جائے گا، جس کے تحت چیٹ کرنے والے صارفین اب اسکرین شاٹ نہیں لے سکیں گے۔

یہ تبدیلی مشروط ہے، واٹس ایپ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ اینڈرائڈ صارفین کو فنگر پرنٹ کی تصدیق کی دستیابی کے بعد اسکرین شاٹ بلاک ملے گا ۔ یعنی اسکرین شاٹ پہلے سے بلاک نہیں ہوگا بلکہ صارف اپنے اینڈرائڈ موبائل فون میں فنگر پرنٹ لاک کو فعال کرنے کی صورت میں اس پابندی کا سامنا کرے گا۔

اگر ایک صارف کے موبائل فون پر فنگر پرنٹ لاک ایکٹو ہے تو وہ واٹس ایپ چیٹ ونڈو کا اسکرین شاٹ نہیں لے سکتا، تاہم دوسری جانب جس سے چیٹ کیا جا رہی ہے، اگر اس کے پاس فنگر پرنٹ لاک ایکٹو نہیں تو وہ چیٹ ونڈو کا اسکرین شاٹ لے سکتا ہے۔

اس کے علاوہ واٹس ایپ نے کسی گروپ میں شمولیت کے حوالے سے بھی پرائیویسی سیٹنگز بھی جاری کی ہیں۔ نئے انوائٹ سسٹم کے تحت صارفین یہ طے کر سکیں گے کہ انہیں دوسرے گروپ میں کون شامل کر سکتا ہے۔ کسی گروپ میں شمولیت کیلئے اینڈرائیڈ فون کی سیٹنگز میں جا کر اکاؤنٹ، اس کے بعد پرائیویسی اور پھر گروپس میں جا کر ’’ نو باڈی‘‘ ،’’ نو کانٹیکٹس‘‘ اور ’’ایوری باڈی‘‘ میں سے کسی ایک انتخاب کرنا پڑے گا۔

نو باڈی سلیکٹ کرنے کا مطلب یہ ہو گا کہ آپ کو پہلے کسی بھی گروپ میں شمولیت کی دعوت ملے گی جسے ایکسیپٹ یا ریجیکٹ کیا جاسکتا ہے۔

نو کانٹیکٹس کے انتخاب کی صورت میں صرف صارف کی کانٹیکٹ لسٹ میں موجود افراد ہی اسے کسی گروپ میں شمولیت کی دعوت دے سکتے ہیں۔

ایوری باڈی منتخب کرنے کا مطلب ہے کہ جس کے پاس بھی متعلقہ صارف کا نمبر محفوظ ہے وہ پوچھے بغیر بھی اسے گروپ میں شامل کرسکتا ہے۔

انتظامیہ کے مطابق گروپ میں شمولیت کیلئے صارف کو ایک انفرادی پیغام بھیجا جائے گا جسے قبول یا مسترد کرنے کیلئے 3 دن کا وقت رکھا گیا ہے، جس کے بعد پیغام کی میعاد خود بخود ختم ہوجائے گی۔

WhatsApp beta version

Bloc

android users

New doodle feature

Tabool ads will show in this div