ہزارہ برادری کا دھرنا، شرکاء نے وزیر اعظم سے تحفظ کی یقین دہانی مانگ لی

کوئٹہ میں ہزارہ برادری کا دھرنا جاری ہے ، شرکاء نے وزیر اعظم سے تحفظ کی یقین دہانی مانگ لی ، سانحہ کی تحقیقات جاری ہیں ۔

کوئٹہ میں ہزار گنبجی خود کش دھماکے کے خلاف ہزارہ برادری کا دھرنا جاری ہے ، درجنوں کی تعداد میں مرد خواتین اور بچےمغربی بائی پاس کو بلاک کئے بیٹھے ہیں، دھرنے کے شرکاء کا کہنا ہے کہ دہشت گردی کے سبب وہ محدود ہو گئے انہیں تعلیمی کاروباری اور سماجی لحاط سے مشکلات کا سامنا ہے ، ملزمان کی گرفتاری تک دھرنا جاری رہے گا وزیراعظم عمران خان کوئٹہ آکر تحفظ کی یقین دہانی کروائیں۔

گورنر بلوچستان امان اللہ یاسین زئی نے ہزارہ ٹائون جاکر سانحہ ہزار گنجی میں جاں بحق افراد کے لواحقین سے تعزیت کی اور فاتحہ پڑھی امان اللہ یاسین زئی کا کہنا تھا کہ دہشت گردوں کا کوئی مذہب ، قوم اور ملک نہیں دہشت گردی کے حالیہ واقعے میں ملوث ملزمان کو جلد گرفتار کیا جائے گا ۔

پاکستان تحریک انصاف کے صوبائی صدر اور رکن بلوچستان اسمبلی سردار یار محمد رند نے سول اسپتال ٹراما سینٹر کا دورہ کیا اور سانحہ میں زخمی افراد کی عیادت کی ، اس موقع پر سردار یار محمد رند نے کہا کہ وہ وزیر اعظم کی خصوصی ہدایت پر عیادت کے لئے آئے ہیں ، ملک اس وقت نازک دور سے گزر رہا ہے ، ملک میں استحکام تھا کہ یہ ناخوشگوار واقعات پیش آئے ، ہماری فورسز دشمن کے خلاف برسر پیکار ہے جلد پاکستان میں مکمل امن ہو گا۔

مجلس وحدت المسلمین کے مرکزی جنرل سیکرٹری علامہ راجہ ناصر عباس نے نیچاری امام بارگاہ میں نیوز کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے حساس علاقے دہشت گردوں کے نشانے پر ہیں ، دشمن ممالک نے دہشت گرد تنظیموں کے ذریعے پاکستان میں بد امنی کا نیا سلسلہ شروع کر دیا ہے ، ملٹری کورٹس سمیت سول عدالتوں سے دہشت گردوں کو سزائیں ہو چکی لیکن عمل نہیں ہوتانیشںل ایکشن پلان کی ضرورت نہیں پڑتی  اگر قوانین پر عمل کیا جائے

علامہ راجہ ناصر عباس نے مطالبہ کیا کہ وزیر اعظم عمران خان نیوزی لینڈ کی  وزیر اعظم کے طرز عمل سے سیکھتے ہوئے کوئٹہ آئیں اور سانحہ ہزار گنجی کے متاثر ین پر دست شفقت رکھیں انہوں اعلان کیا کہ آئندہ جمعہ ہزار گنجی خود کش دھماکے کے متاثرین سے اظہار یکجہتی کے لئے ملک گیر مظاہرے کئے جائیں گے۔

ادھر ہزار گنجی دھماکے کی تحقیقات جاری ہیں ، خود کش حملہ آور کے جسمانی اعضاء ڈی این اے کیلئے لیبارٹری بھجوا دئیے گئے سی ٹی ڈی حکام کہتے ہیں کرائم سین کی جیو فینسنگ بھی کی جارہی ہے۔

HAZARA

Tabool ads will show in this div