جعلی اکاؤنٹس کیس، نیب کا اومنی گروپ کیخلاف ریفرنس دائر کرنے کا فیصلہ

قومی احتساب بیورو (نیب) نے جعلی بینک اکاؤنٹس کیس میں اومنی گروپ کيخلاف ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دے دی۔

چیئرمین نیب جاوید اقبال نے اومنی گروپ کے عبدالغنی مجید اور دیگر کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دے دی جبکہ سابق ایڈمنسٹریٹر کراچی میونسپل کارپوریشن محمد حسین سید سمیت پانچ دیگر ملزمان کے خلاف بھی ریفرنس دائر کیے جائیں گے۔

ملزمان پر جعلی اکاؤنٹس کے استعمال اور سرکاری زمین کی غیرقانونی الاٹمنٹ سے خزانے کو تقریباً ڈیڑھ ارب روپے کا نقصان پہنچانے کا الزام ہے۔

سپریم کورٹ نے اومنی گروپ کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دے دیا

وفاقی ترقیاتی ادارے کے سابق ڈائریکٹر جنرل پلاننگ غلام سرور سندھو کیخلاف بھی ریفرنس دائر ہوگا۔ ان پر ڈپلومیٹک شٹل سروس کےلیے خلاف قانون الاٹمنٹ کرکے خزانے کو 40 کروڑ روپے سے زائد کا نقصان پہنچانے کا الزام ہے۔

سیکریٹری خصوصی اقدامات سندھ اعجاز احمد خان، سندھ کے ہی ہیلتھ آفیسر علی گوہر ڈاہر اور سابق سیکریٹری ویلفیر فنڈ افتخار رحیم خان کےخلاف بھی ریفرنس دائر کیا جائے گا، ملزمان پر کرپشن اور اختیارات کے ناجائز استعمال کا الزام ہے۔

NAB references

Fake bank accounts case

Omni Group

Abdul Ghani Majeed

illegal allotment case

Tabool ads will show in this div