شناختی کارڈ کیسے مانگا؟ سابق ايڈمنسٹريٹر کراچی کی بدمعاشی

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2018/03/EX-Administrator-Badtameezi-KHI-PKG-26-03-REms.mp4"][/video]

کراچي ميں پي آئي ڈي سی کے قريب سابق ايڈمنسٹريٹر کي پوليس اہلکار سے بدمعاشي ، ريڈ زون ميں فہيم الزماں سے شناختي کارڈ کيا طلب کيا گيا تو انہوں نے بد تميزي کي ساري حديں پار کرڈاليں، دھمکياں ديں اور مغلظات بکتے رہے۔

پي آئي ڈي سي چوک پر خصوصي چيکنگ جاري تھي کہ کہ فرض شناس اہلکار نے سابق ايڈمنسٹريٹر کراچی فہيم الزماں کو روکا اور شناختي کارڈ مانگا تو موصوف آپے سے باہر ہوگئے۔ پولیس اہلکار سے الجھتے ہوئے کہا کہ مجھے جانتے ہو ميں سابق ايڈمنسٹريٹر ہوں، مجھے روکنے کي ہمت کيسے ہوئي، ابق ايڈمنسٹريٹر نے کبھي آئي جي کي دھمکي دي کبھي ايڈيشنل آئي جي کي، پوليس اہلکار بے چارہ بھي سر سر کہتا رہ گیا۔

پوليس اہلکار نے بھي جانے کا کہا مگر فہيم الزماں ٹس سے مس نہ ہوئے، جب سماء نے سوال کيا تو مظلوم بن گئے اور پوليس اہلکار پر بندوق تاننے کا الزام لگا ديا۔

سوشل ميڈيا پر وڈيو وائرل ہوئي تو آٗئي جي سندھ نے نوٹس لے ليا اور فيصلہ کیا ساؤتھ زون پوليس فہيم الزماں کے خلاف مقدمہ درج کرے گی۔

PIDC

snap checking

Ex administrator

Fahim uz zaman

Tabool ads will show in this div