سرائیکی کلچر ڈے پر جھومر کا تڑکا

جنوبی پنجاب  کے باسیوں کا خاص لب و لہجہ ، جس کی گونج ملک کے چاروں صوبوں میں ہی نہیں ، کئی اور ممالک میں بھی سنائی دیتی ہے۔ سرائیکی کلچرل ڈے پر اسلام آباد میں دھوم مچا دی گئی،جھومر کے تڑکے نے تو سماں ہی باندھ دیا۔

اسلام آباد میں سرائیکی ثقافت کے رنگ بکھرگئے۔ سرائیکی شاعری اور موسیقی کے تو کیا ہی کہنے تھے،لیکن بات پہنچی سرائیکی لوک رقص جھومر تک تو پھر سبھی جھوم جھوم اٹھے۔

نرم لہجے کی میٹھی بولی کے اچھوتے رنگ محفل کے شرکاء کو تو خوب ہی بھائے ۔شرکا کا کہنا تھا کہ اس طرح کے ایونٹس کا انعقاد بہت ضروری ہے اور اس سے کلچر اور اپنی تہذیب و ثقافت کو فروغ دیا جاسکتا ہے۔ میانوالی سے آئے لوک فنکاروں نے محفل میں چار چاند لگا دئیے۔

سرائیکی وسیب والوں کی یہ خاصیت ہے کہ جہاں مل بیٹھیں وہیں محفل جما لیتے ہیں۔

regional languages

Siraiki Cultural Day

Tabool ads will show in this div