وفاقی کابینہ کے اجلاس میں 18 نکاتی ایجنڈے پر غور ہوگا

وزیراعظم عمران خان کی زیرِ صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس آج ہورہا ہے۔

وفاقي کابينہ کے اجلاس ميں ملکی سلامتی، معیشت سمیت 18 نکاتی ایجنڈے پر غور کیا جائے گا،اجلاس ميں حکومتی اصلاحات پر عملدرآمد اور دیگر امور پر بریفنگ دی جائے گی،ای سی سی کے 26 فروری کے فیصلوں کی توثیق بھی ایجنڈے میں شامل کی گئی ہے۔

اجلاس میں حکومتی اصلاحاتی ایجنڈے میں پیش رفت پر بریفنگ دی جائے گی، ایئربلیو کمپنی کی ریگولر پبلک ٹرانسپورٹ لائسنس کے تجدید کی منظوری ایجنڈے میں شامل ہے۔

اس کے علاوہ پی او ایف بی کے ممبر پروڈکشن کوآرڈینشن کی تعینات ایجنڈے میں شامل کی گئی ہے ، ہیوی انڈسٹریز ٹیکسلا بورڈ میں ایم پی سی تعینات کرنے کا معاملہ ایجنڈے میں شامل ہے۔

پبلک سیکٹر انٹرپرائزز میں چیف ایگزیکٹو کے انتخاب کے طریقہ کار ایجنڈے میں شامل کی گیا ہے جبکہ مالی سال 2017 ، 18 کےلیے اضافی اخراجات کو مستقل بنانے اور سپلی منٹری گرانٹ کو مستقل کرنا ایجنڈے میں شامل ہے۔

خیبرپختوںخوا اور بلوچستان سے نیشنل بینک آف پاکستان کے بورڈ آف ڈائریکٹرز پر ڈائریکٹرز کی تعیناتی ایجنڈے کا حصہ ہے۔ پاکستانی وزارت خارجہ اور لتھوینیہ  کے درمیان ایم او یو کی منظوری بھی کابینہ اجلاس میں دی جائے گی۔

IMRAN KHAN

CABINET MEETING

Tabool ads will show in this div