خود کو نوبل پرائز کا حق دار نہیں سمجھتا، وزیراعظم عمران خان

وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ میں خود کو نوبل پرائز کا حق دار نہیں سمجھتا، اس کا حقدار وہ ہوگا جو کشمیری عوام کی خواہشوں کے مطابق مسئلہ کشمیر حل کرے۔

سماجی رابطے کی سائٹ ٹوئٹر پر وزیراعظم عمران خان نے اپنے پیغام میں کہا ہے کہ میں نوبل پرائز کا حق دار نہیں، حقدار وہ شخص ہوگا جو کشمیریوں کی رائے کے مطابق کشمیر کے مسئلے کا حل نکالے اور برصغیر میں انسانی ترقی اور امن کا راستہ نکالے۔

 

واضح رہے کہ وزیراعظم کی جانب سے جذبہ خیرسگالی کے تحت بھارتی پائلٹ کی رہائی کے اعلان کے بعد نوبل پرائز فارعمران خان کا ہیش ٹیگ ٹوئٹر پر ٹاپ ٹرینڈ بن گیا تھا، جب کہ دنیا بھر کے اخبارات اور نیوز چینلز نے بھی پاکستان کے فیصلے کو ہیڈلائنز کا حصہ بنایا اور پاکستانی وزیراعظم عمران خان کے فیصلے کو سراہا۔

سوشل میڈیا پر دنیا بھر سے وزیراعظم عمران خان کو امن کا سفیر قرار دے کر انھیں امن کا نوبل انعام دینے کی مہم شروع کی گئی، آن لائن درخواست پر اب تک ڈیڑھ لاکھ سے زائد افراد دستخط کرچکے ہیں۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ 27 فروری کو پاکستانی فضائی حدود کی خلاف ورزی پر بھارت کے دو طیارے مار گرائے تھے اور پائلٹ ابھی نندن کو گرفتار کرلیا تھا، جس کے بعد بھارت نے بھی طیاروں کی تباہی اور پائلٹ لاپتا ہونے کا اعتراف کیا۔

بعد ازاں وزیراعظم عمران خان نے قومی اسمبلی کے مشترکا اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے گرفتار بھارتی پائلٹ کو رہا کرنے کا اعلان کیا تھا اور کہا تھا کہ بھارت اس سے زیادہ کشیدگی کو آگے نہ بڑھائے۔

وزیراعظم عمران خان کے اعلان کے بعد یکم مارچ کو بھارتی پائلٹ ابھی نندن کو واہگہ بارڈر پر بھارتی حکام کے حوالے کیا گیا تھا۔

Nobel Prize

Twitter top trend

PM IMRAN KHAN

INDIAN PILOT

ABHINANDAN

Tabool ads will show in this div