بھارتی پائلٹ کو امریکی ڈکٹیشن پر چھوڑا گیا، پرویز رشید کا الزام

ن ليگ کے رہنما پرويز رشيد نے وزيراعظم عمران خان کی خارجہ پاليسي کو ناکام قرار دے ديا۔

لاہور میں سماء کے نمائندے نعیم اشرف بٹ سے بات کرتے ہوئے لیگی رہنما نے کہا کہ بھارتی پائلٹ ابھي نندن کو امريکي ڈکٹيشن پر چھوڑا گيا۔ انھوں نے دعویٰ کیا کہ عمران خان اور شاہ محمود قريشي کي خارجہ پاليسي عليحدہ عليحدہ ہے۔

پرویز رشید کا کہنا تھا کہ پاکستان نے عسکري محاذ پر واضح برتري حاصل کي لیکن وزيراعظم کي خارجہ پاليسي ناکام ہوگئي،سیاسی اور خارجی محاذ پر ہميں دنيا کي حمايت نہيں ملي۔

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان بھارتی ہم منصب نریندر مودی سےبات کرنےکی کوشش کررہےہیں جبکہ شاہ محمود قريشي بھارتي وزير خارجہ ششما سوراج سے بات نہيں کرنا چاہتے۔

پرویز رشید نے کہا کہ جو کام ہمارے دورمیں گناہ تھے، اب ثواب ہوگئے،نریندر مودی جب نوازشریف سے ملنےآئے تو وہ گناہ اورغداری تھی۔

لیگی رہنما کا مزید کہنا تھا کہ کوٹ لکھپت جیل میں قید نوازشریف کي ضمانت کا کیس مضبوط ہے،اسی لیے سپریم کورٹ گئے ہیں۔

 

PERVEZ RASHEED

PML N

INDIAN PILOT

Tabool ads will show in this div