یونی ورسٹی میں طالبات کے چست پاجاما اور جینز پہننے پر پابندی

لاہور کي یونی ورسٹی آف انجينئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی  کے شعبہ بزنس اینڈ مینجمنٹ میں طلبا کے لیے نیا ڈریس کوڈ جاری کرتے ہوئے طالبات کے چست پاجامے اور جینز پہننے پر پابندی عائد کردی گئی ہے، جب کہ بغیر بازو والی قمیض بھی ممنوع قرار دی گئی ہے۔ خلاف ورزی کی صورت میں جرمانہ بھی عائد ہوگا۔

لاہور کي یونیورسٹی آف انجينئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی کی جانب سے جامعہ کے شعبہ بزنس اینڈ مینجمنٹ کے خواتین اور مرد اسٹوڈنٹس کیلئے لباس سے متعلق نئے قانون متعارف کرائے گئے ہیں۔

یونی ورسٹی کی حدود میں طالبات کیلئے دوپٹا اور اسکارف لازمی قرار دے ديا گيا ہے، جب کہ خلاف ورزی کرنے پر پانچ ہزار روپے جرمانہ دينا ہوگا۔ نئے ڈریس کوڈ کا اطلاق گيارہ مارچ سے ہوگا۔

غور طلب بات یہ ہے کہ پوري جامعہ کيلئے الگ، تاہم ايک ڈپارٹمنٹ کيلئے الگ ڈريس کوڈ پاليسي جاري کردي گئي ہے، جس کے مطابق طالبات ٹائٹس نہيں پہن سکيں گي۔ دوسری جانب طلباٗ جمعہ کو شلوار قمیض پہننے کے پابند ہونگے۔

 

نئے ڈریس کوڈ کا اطلاق شعبہ بزنس اینڈ مینجمنٹ پر ہوگا۔ شعبے کے ڈائریکٹر کی جانب سے جاری ہونے والے نوٹی فیکشن کے مطابق طلبہ کے لئے ڈریس پینٹ ،شرٹ یا شلوار قمیض بمع ویسٹ کوٹ اور جمعہ کے دن شلوار قمیض پہننا لازمی ہوگا۔

Photo Courtesy Ambreen Sikander,Islamabad

دوسری جانب اسلام آباد کی بحریہ یونی ورسٹی میں بھی کچھ ایسی ہی صورت حال دیکھنے میں آئی، جہاں یونی ورسٹی کے مرکزی دروازے کے ساتھ اسٹوڈنٹس کو جامعہ میں آنے کیلئے ڈریس کوڈ کی پابندی کیلئے خاص ہدایات جاری کی گئی ہیں۔

 

جامعہ کے کیمپس میں خواتین طالبات کو ٹائٹس پہننے کی ہرگز اجازت نہیں، جب کہ ہر ڈریس کے ساتھ اسکارف یا ڈوپٹا لازمی قرار دیا گیا ہے۔ جینز اور ڈراونز پہننے کی صورت میں لمبی قمیض پہننا ہوگی، جب کہ بغیر آستینوں والی قمیض کی اجازت نہیں۔

[caption id="attachment_1469397" align="aligncenter" width="823"] Photo Courtesy Ambreen Sikander[/caption]

متعلق قوانین کی خلاف ورزی کرنے پر پہلی بار 1000 روپے جرمانہ، دوسری بار 5000 روپے جرمانہ اور تیسری بار میں یونی ورسٹی سے خارج کر دیا جائے گا، تاہم یونی ورسٹی کیمپس میں داخل ہوں تو بورڈ پر درج تمام قوانین ہوا ہوتے نظر آتے ہیں۔

dress code

Jeans

BAHRIA UNIVERSITY

UET

Tabool ads will show in this div