جنگیں مسائل کا حل نہیں،آخر میں مذاکرات کی میز پرآنا پڑتا ہے،شہبازشریف

 

قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہبازشریف نے کہا ہے کہ پاکستان کو معاشی طور پر مضبوط اور مستحکم بنانا ہوگا،جنگیں مسائل کا حل نہیں، مذاکرات کی میز پر آنا ہوتاہے،پاکستان اپنی تاریخ کے نازک دور سے گزر رہا ہے۔ کشمیر بننے کا پاکستان ایک دن شرمندہ تعبیر ہوگا اور پاکستان کا حصہ بن جائے گا، پاکستان متحد ہے اور ملک کے مفاد میں تمام ضروری اقدامات کریں گے۔ انھوں نے وزیراعظم کی تجویز سے اتفاق کیا کہ خطے بد امنی کا متحمل نہیں ہوسکتا۔

پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے اپوزیشن لیڈر شہباز شريف نے کہا ہے کہ فوج کي کارکردگي پر قوم کا سر فخر سے بلند ہے۔افواج پاکستان دھرتي کے چپے چپے کي حفاظت کرے گي،فوج کسي قرباني سے دريغ نہيں کرے گي۔

شہبازشریف نے کہا کہ اسکواڈرن ليڈر حسن صديقي قوم کے ہيرو ہيں۔ پڑوسی ممالک کے درميان يہ لڑائي پہلي نہيں ہے۔پہلے بھي تين جنگيں لڑيں، وسائل جھونک ديے گئے۔ انھوں نے کہا کہ جنگيں مسائل کا حل نہيں، آخرميں مذاکرات کي ميز پر آنا پڑتا ہے۔

کشمیر سے متعلق شہبازشریف کا کہنا تھا کہ کشمير کا مسئلہ کشميريوں کي خواہشات کے مطابق حل کرنا ہوگا،ايسا نہيں ہوا تو خطے ميں امن قائم نہيں ہوسکے گا، بھارت کو کشميريوں کو ان کا حق دينا ہوگا، مقبوضہ وادی میں کشمیریوں کاخون بہایاجارہاہے۔

جنگ کا خطرہ کم ہوگیا ہے مگر تیار رہنا مسلمان کی شان ہے،شیخ رشید

بھارتی وزیراعظم سے متعلق اپوزیشن لیڈر نے کہا کہ پلوامہ واقعے کے بعد مودي کے الزامات ڈھونگ ہيں۔ نریندرمودی کے گجرات فسادات کسی سےڈھکےچھپےنہیں۔ گجرات فسادات کےبعدمودی کااصل چہرہ دنیاکےسامنےآیا، گجرات فسادات میں مسلمانوں کےخون سےہولی کھیلی گئی، نریندرمودی دہشتگرد ہے جس نے ہزاروں مسلمانوں کو قتل کرایا۔

PML N

Joint session

Tabool ads will show in this div