’جانتی ہوں کس کے تن پر کس کے کپڑے ہیں‘

قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران اظہار خیال کرتے ہوئے ڈاکٹر فہمیدہ مرزا نے پیپلز پارٹی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ مجھے خوب معلوم ہے کس کے تن پر کس کے کپڑے ہیں۔ مجبور نہ کریں ورنہ سندھ  بینک لوٹنے والوں کا کچا چٹھا کھول دوں گی جس پر پیپلز پارٹی کے ارکان نے احتجاج کرتے ہوئے اسپیکر ڈائس کا گھیراؤ کرلیا۔

اسپیکر اسد قیصر کی زیر صدارت قومی اسمبلی کے اجلاس میں جیالے رکن میر منور تالپور نے ڈاکٹر فہمیدہ مرزا پر طعنہ کستے ہوئے کہا کہ یہ تو قرآن سر پر رکھ کر کہتے تھے کہ ان کے بدن پر کپڑے بھی زرداری کے دیئے ہوئے ہیں۔

ڈاکٹر فہمیدہ مرزا یہ سن کر پھٹ پڑیں۔ کہنے لگیں مجبور نہ کریں ورنہ دستاویزات کے ساتھ سندھ بینک لوٹنے والوں کا کچا چٹھا کھول دوں گی۔ فہمیدہ مرزا کے بیان پر پی پی ارکان نے اسپیکر ڈائس کے سامنے احتجاج شروع کردیا۔

نون لیگ کے خواجہ آصف نے کہا کہ حامد سعید کاظمی، شیخ رشید اور جاوید ہاشمی کے پروڈکشن آرڈرز جاری ہوسکتے ہیں تو خواجہ سعدرفیق کے کیوں نہیں۔ لیگی ارکان نے خواجہ سعد فیق کے پروڈکشن آرڈر کیلئے رولنگ کا مطالبہ کیا تو اسپیکر نے کہا اطمینان رکھیں آپ کو مایوس نہیں کریں گے۔ بعد میں قومی اسمبلی اجلاس منگل دن گیارہ بجے تک ملتوی کردیا گیا-

Politics

Fehmida Mirza

Tabool ads will show in this div