ارکان پارلیمنٹ کی ٹیکس ڈائریکٹری جاری

Feb 22, 2019

سال 2017 میں ارکان پارلیمنٹ نے کتنا ٹیکس دیا؟ اس حوالے سے ٹیکس ڈائریکٹری جاری کردی گئی ہے۔ عمران خان ايک لاکھ اور نوازشريف دو لاکھ والی فہرست میں شامل ہیں جبکہ جہانگير ترين نے نو کروڑ تہتر لاکھ روپے ٹيکس ادا کيا۔

ایف بی آر نے ارکان پارلیمنٹ کی ٹیکس ادائیگی کے حوالے سے سالانہ ڈائریکٹری جاری کر دی ۔ موجودہ وزیراعظم نے 2017 میں بطور رکن پارلیمنٹ 1 لاکھ 3 ہزار 763 روپے ٹیکس دیا جبکہ سابق وزیراعظم نواز شریف نے 2 لاکھ 63 ہزار 173 روپے ٹیکس ادا کیا۔

پی ٹی آئی رہنما جہانگیر ترین سب سے زیادہ ٹیکس ادا کرنے والوں کی فہرست میں شامل ہیں جنہوں نے 9 کروڑ 73 لاکھ 17 ہزار 272 روپے انکم ٹیکس ادا کیا۔

موجودہ صدر پاکستان عارف علوی نے 2017 میں بطور رکن پارلیمنٹ 3 لاکھ 77 ہزار 511 روپے ٹیکس جمع کرایا۔

شہباز شریف نے 2017 میں 1 کروڑ 2 لاکھ 96 ہزار 518 روپے جبکہ حمزہ شہباز نے 82 لاکھ 68 ہزار 298 رو پے ٹیکس ادا کیا جبکہ شیخ رشید احمد نے 2017 میں 7 لاکھ 2 ہزار 698 روپے ٹیکس ادا کیا۔

خواجہ سعد رفیق نے 52 لاکھ 24 ہزار، اسد عمر نے 48 لاکھ 49 ہزار 615 روپے، چوہدری نثار علی خان نے 17 لاکھ 23 ہزار، سردار ایاز صادق نے 2 لاکھ 89 ہزار جبکہ فہمیدہ مرزا نے 2 لاکھ 27 ہزار روپے ٹیکس دیا۔

رکن پارلیمنٹ شیخ فیاض الدین نے 1 کروڑ 40 لاکھ روپے ٹیکس ادا کیا۔ جام کمال نے 61 لاکھ 45 ہزار جبکہ شاہد خاقان عباسی نے 30 لاکھ 81 ہزار انکم ٹیکس دیا۔

پی ٹی آئی رہنما شاہ محمود قریشی نے 6 لاکھ 53 ہزار 943 روپے، مشاہد حسین سید نے 1 لاکھ 66 ہزار 437 روپے جبکہ عثمان سیف اللہ خان نے 32 لاکھ 30 ہزار سے زیادہ ٹیکس دیا۔

سید نوید قمر نے 2017 میں 1 لاکھ 65 ہزار 243 روپے، مراد علی شاہ نے 9 لاکھ 88 ہزار 864 روپے جبکہ فریال تالپور نے 28 لاکھ 69 ہزار 133 روپے ٹیکس دیا۔

احسن اقبال نے 3 لاکھ 68 ہزار جبکہ خسرو بختیار نے 4 لاکھ 75 ہزار روپے انکم ٹیکس ادا کیا ۔

 

Parliamentarians

Parliamentarian TAX Directory

PM IMRAN KHAN

Tax payers