بہادر نوجوان نے 80 پونڈ وزنی شیر کو ہاتھوں سے مار ڈالا

امریکی ریاست کولوراڈو کے پہاڑی علاقے میں بہادر نوجوان نے 80 پونڈ وزنی پہاڑی شیر کو ہاتھوں سے مار کر ہلاک کر دیا۔

آپ سب ہی لوگوں نے بچپن میں ہرکولیس اور اس کی بہادری کے قصّے تو سنے ہونگے۔ صرف ہرکولیس ہی نہیں ایسے کئی بہادر اور جاندار کردار آپ کے بچپن میں آپ کا آئیڈیل رہے ہونگے جنہوں نے اکیلے اور تنِ تنہا کیسے بڑے بڑے جانوروں اور جنوں سے مقابلہ کیا اور انہیں مار کر کامیاب ہوئے۔

تاہم امریکی ریاست کولوراڈو میں ایسی کہانی حقیقت بن گئی، جہاں ایک نوجوان نے تنِ تنہا بغیر کسی ہتھیار کے 80 پونڈ وزنی پہاڑی شیر کو ہاتھوں سے مقابلے کے بعد ہلاک کر دیا۔

نوجوان کی بہادری کا قصہ سن کر ہر کوئی حیران ہے کہ اس نے بغیر کسی چھری، چاقو اور ہتھیار کے کیسے اتنے بڑے خون خوار جانور کو ڈھیر کر ڈالا۔ ڈینور پوسٹ کے مطابق واقعہ امریکی ریاست کولوراڈو کے پہاڑی علاقے میں پیش آیا۔ جہاں خون خوار جانور نے پہلے نوجوان پر عقب سے حملہ کیا اور اس کے چہرے، کلائی اور کندھے پر کاٹ لیا، جس سے وہ زخمی پوگیا۔

اسی (80) پونڈ وزنی جنگلی شیر کو سامنے دیکھ کر نوجوان کو اپنی موت یقینی نظر آئی، تاہم زندگی بچانے اور زندہ رہنے کے جذبے نے اس نوجوان کو نئی طاقت دی اور نوجوان نے نہتے ہوتے ہوئے بھی اس جنگلی شیر کو اپنے ہاتھوں سے قابو کرکے ہلاک کر دیا۔

کولوراڈو پارکس اور وائلڈ لائف کی ترجمان ریبیکا نے فی الحال نوجوان کی شناخت ظاہر نہیں کی، تاہم انہوں نے نوجوان کی بہادری کو خوب سراہا ہے۔ ترجمان کے مطابق نوجوان نے نہ صرف اسے ہلاک کیا، بلکہ مارنے سے قبل اس کا راستہ روک کر اپنے سر سے ٹکریں بھی ماریں۔

بعد ازاں نوجوان نے اس جنگلی شیر کو اپنے ہاتھوں سے گلہ دبا کر ہلاک کیا۔ زخمی نوجوان خون خوار شیر کو مارنے کے بعد خود اسپتال بھی پہنچا، جہاں اسے فوری طبی امداد فراہم کی گئی۔ واقعہ کے بعد وائلد لائف حکام اور پولیس نے جائے وقوعہ سے نوجوان کا سامان اور مردہ شیر کو قبضے میں لے لیا۔

MOUNTAIN

ANIMAL

Beast

Tabool ads will show in this div