ڈی سی اسلام آباد کا آن لائن ٹیکسی سروس کے ڈرائیورزکے کوائف جمع کرنے کا حکم

ڈپٹی کمشنر اسلام آباد نے آن لائن ٹیکسی سروس کے ڈرائیورز کے کوائف جمع کرنے کا حکم دیا ہے۔

اسلام آباد میں آن لائن ٹیکسی سروس کے ڈرائیور کی جانب سے مسافر کو لوٹنے کے بعد صورتحال تبدیل ہوگئی ہے۔ ڈی سی اسلام آباد حمزہ شفاعت نے ٹیکسی سروس کو ڈرائیورزکے کوائف جمع کرانے کا حکم دیا ہے۔

انھوں نے واضح کیا ہے کہ ٹیکسی سروس کے تمام ڈرائیورز کا ڈیٹا اپریل تک جمع کرائیں۔ ڈی سی اسلام آباد کا کہنا ہے کہ آن لائن ٹیکسی سروس میں بغیر کوائف کے لوگ گاڑیاں چلا رہے ہیں اوراس ادارے نے کہیں بھی اپنا ڈیٹا جمع نہیں کروایا ہوا ہے۔ کشمنر نے بتایا کہ فراڈ کرنے والے ڈرائیور کی رجسٹریشن غلط کوائف پر کی گئی۔اسلام آباد کی انتظامیہ نے دو ٹوک کہہ دیا ہے کہ آن لائن ٹیکسی سروس کو سسٹم میں لائیں گے۔

اس سے قبل ڈی سی اسلام آباد نے وارننگ دی تھی کہ چوری میں ملوث ڈرائیورگرفتارنہیں ہوا توٹیکسی کمپنی کے خلاف کارروائی ہوگی۔ اس کیس میں آن لائن ٹیکسی سروس کو بھی شامل تفتیش کرلیا گیا ہے۔

اسلام آباد میں تین روز قبل آن لائن ٹیکسی سروس کے ڈرائیور کے فراڈ کا ڈپٹی کمشنر نے متاثرہ شخص کی درخواست پر ایکشن لے لیا ہے۔ متاثرہ شخص نے بتایا ہے کہ متعدد بار رابطہ کرنے کے باوجود کمپنی نے تعاون نہیں کیا۔

چوری میں ملوث ڈرائیورگرفتارنہیں ہوا توٹیکسی کمپنی کےخلاف کارروائی ہوگی،ڈی سی کی وارننگ

پولیس نے بتایا ہے کہ ملزم اس سے قبل بھی شہری کے ڈیڑھ لاکھ روپے ہتھیا چکا ہے۔پولیس نے مزید بتایا ہے کہ ملزم کو گھر والے پہلے ہی عاق کرچکے ہیں اور اس کوجلد گرفتار کر لیں گے۔

واضح رہے کہ وفاقی دارالحکومت میں نجی ٹیکسی سروس کے ڈرائیور نے مسافرفدا حیدرکوہفتے کے روز لوٹ لیا تھا۔ رائیڈ مکمل کرنے کے بعد مسافرٹکٹ لینےکیلئے جونہی فیض آباد بس اسٹینڈ پراترا تو ٹیکسی کے ڈرائیور نے مسافر کا بیگ چھین کرگاڑی بھگالی۔

فدا حیدر کے گاڑی میں رکھے بیگ میں نقدی سمیت قیمتی سامان موجود تھا۔ مسافر کی درخواست پر تھانہ آئی نائن پولیس نے مقدمہ درج کرکےملزم کی تلاش شروع کی ۔

careem

Online taxi service

Tabool ads will show in this div