ٹیکنالوجی

دنیا کو انٹرنیٹ کا تحفہ دینے والا سائنس دان انتقال کرگیا

دنیا کو انٹرنیٹ کا تحفہ دینے والے سائنسدانوں کے گروپ میں شامل امریکی سائنس دان لیری رابرٹس 81 سال کی عمر میں امریکی شہر نیویارک میں انتقال کر گئے۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کی جانب سے جاری رپورٹس کے مطابق 1960ء کے عشرے میں لیری رابرٹس نے امریکا کے ایڈوانس سرچ پروگرام ایجنسی کی ذمہ داریاں سنھبالیں۔

 

انہیں کمپیوٹر نیٹ ورک کی اہم ذمہ داری سونپی گئی اور ان کے اس پروگرام کو دنیا ارپانٹ کے نام سے جانتی ہے۔

 

آنجہانی انجینیر اور سائنسدان لیری رابرٹس نے کئی آپریٹنگ پروگرامز اور سافٹ ویئر کی تیاری میں بھی اہم کردار ادا کیا۔ ارپانٹ نیٹ ورک نے دنیا کو ایک ایسا تحفہ دیا جسے انسان ہمیشہ یاد رکھیں گے۔

 

جی ہاں عام الفاظ میں ہم کہہ سکتے ہیں کہ یہ تحفہ انٹرنیٹ کا تھا جسے آج کی ترقی کا ایک اہم زینہ تصور کیا جاتا ہے۔

لیری رابرٹس ان چار سائنسدانوں میں سے ایک ہیں، جنہوں نے انٹرنیٹ کی ایجاد کے لیے سائنسی فارمولے دیئے۔ ان کے دیگر ساتھیوں میں پوپ کان، فینٹ سیرف اور ولین کلائنروک شامل ہیں۔

COMPUTER

search engine

US scientist

larry roberts

arpanet

Tabool ads will show in this div