معطل ایس ایس پی راؤ انوار ریٹائر ہوگئے

نقیب اللہ قتل کیس میں معطل پولیس افسر راؤ انور ریٹائر ہوگئے، وہ 1982ء میں سندھ پولیس میں بطور اے ایس آئی بھرتی ہوئے، ان کا موجودہ رینک ایس ایس پی تھا۔

ایس ایس پی راؤ انوار ریٹائر ہوگئے، انہوں نے سندھ پولیس میں 37 سال تک خدمات انجام دیں، 1982ء میں وہ بطور اے ایس آئی بھرتی ہوئے تھے۔

سندھ پولیس کی جانب سے اپریل 2018ء میں 31 دسمبر 2018ء کو ریٹائر ہونے والے پولیس افسران کی فہرست جاری کی گئی تھی جس میں راؤ انوار کا نام بھی شامل تھا۔

ایس ایس پی ملیر راؤ انوار کو نقیب اللہ قتل کیس میں ملوث ہونے کے الزام پر معطل کردیا گیا تھا، ان کے خلاف اس حوالے سے تحقیقات جاری ہیں جبکہ مقدمہ سپریم کورٹ میں زیر سماعت ہے۔

جنوری 2018ء میں کراچی کے علاقے سہراب گوٹھ میں نقیب اللہ کو مبینہ جعلی پولیس مقابلے میں قتل کردیا گیا تھا، یہ معاملہ سوشل میڈیا پر اٹھا تو پولیس نے تحقیقات کا آغاز کیا جبکہ سپریم کورٹ نے بھی ازخود نوٹس لیا تھا۔

گزشتہ ماہ نقيب اللہ قتل کيس ميں ضمانت پر رہا سابق ایس ایس پی راؤ انوار نے عمرے پر جانے کیلئے اپنا نام ای سی ایل سے نکالنے کیلئے سپريم کورٹ ميں درخواست دائر کی تھی۔

انہوں نے مؤقف اختیار کیا تھا کہ مخالفین نے نشانہ بنانے کيلئے میرے خلاف مہم چلائی، مجھے اور ماتحتوں کو جعلی پولیس مقابلے میں ملوث قرار دیا گیا، ٹرائل کورٹ نے گرفتاری کے بعد ضمانت منظور کی۔

sind

RAO ANWAR

Tabool ads will show in this div