تازہ ترین

پاک افغان مفاہمتی عمل، مختلف شعبوں میں تعلقات بڑھانے پر اتفاق

وزیرخارجہ شاہ محمود چارملکی دورے کے پہلے مرحلے میں کابل پہنچ گئے  ہیں جہاں انہوں نے افغان صدر اور وزیر خارجہ سے ملاقات کی جس میں دوطرفہ سیاسی، تجارتی اور ثقافتی تعلقات کےفروغ پراتفاق کیا گیا۔

کابل میں وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی اورافغان وزیرخارجہ صلاح الدین ربانی کے درمیان وفود کی سطح پرملاقات ہوئی جس میں علاقائی اوربین الاقوامی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا اور افغان مفاہمتی عمل، معیشت کے مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے پربات چیت کی گئی۔

افغان وزیر خارجہ نے افغان امن کے حوالے سے ہونے والی مثبت پیش رفت سےآگاہ کیا۔ اس موقع پر شاہ محمود قریشی نےخطے میں دیرپا امن و استحکام کیلئے روابط بڑھانے پرزوردیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان نے ہمیشہ افغانستان میں امن وسلامتی کی بات کی ہے۔ افغان وزیر خارجہ نے افغانستان میں قیام امن کیلئے پاکستان کی کوششوں کو سراہا۔

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے افغان صدراشرف غنی سے بھی ون آن ون ملاقات کی جس میں باہمی دلچسپی کے امور، علاقائی اور بین الاقوامی صورتحال پر گفتگوکی گئی۔

شاہ محمود قریشی افغانستان کے بعد ایران، چین اور روس بھی جائیں گے۔ سیکریٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ اوروزارتِ خارجہ کے اعلیٰ حکام بھی ان کے ہمراہ ہیں۔

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق دورے کا مقصد وزیراعظم عمران خان کے ویژن کی روشنی میں ہمسایہ ممالک سے بہترتعلقات کافروغ ہے۔

Afghan Foreign Minister

Tabool ads will show in this div