لاکھوں مداحوں کے دلوں پر راج کرنے والے دلدار پرویز بھٹی کی برسی

اسٹاف رپورٹ
لاہور : معروف ٹی وی میزبان اور دانشور دلدار پرویز بھٹی نے زندگی کے کئی سال ٹی وی اور ریڈیو کو دے کر لاکھوں مداح پیدا کیے۔ متعدد زبانوں پر عبور رکھنے والے دلدار پرویز بھٹی نے پنجابی  زبان کی مٹھاس دنیا تک ایسے پہنچائی کہ ان کا پروگرام میلہ آج بھی مداحوں کو یاد ہے۔ مرحوم کی سولہويں برسی آج منائی جا رہی ہے۔

مختصرعرصے ميں سيکڑوں دلوں ميں گھر کرنے والے ٹی وی اور ريڈيو کے ہر دل عزيز کمپئر دلدار پرويز بھٹی اپنی حاضر جوابی میں بے مثال تھے۔ بيک وقت اردو، انگريزی اور پنجابی زبان پر عبور، ان کی پہچان کی وجہ بنا اور اِن تينوں زبانوں ميں برجُستہ مزاح ان کی کمپئرنگ کا خاصہ تھا۔ دلدار پرويز بھٹی  نے اپنے فنی سفر کا آغاز ريڈيو پاکستان لاہور سے کيا۔ انيس سو چہتر ميں ٹيلی ويژن پر پروگرام کرنے کا موقع ملا تو ان کے عوامی انداز کو ملک گير شہرت حاصِل ہوئی۔

ٹی وی پروگرامز 'ٹاکرا'، ''يادش بخير'، اور'جواں فکر'،  کی کاميابی کے بعد انيس سو ستاسی ميں انہوں نے 'ميلہ' پروگرام کيا، انيس سو نوے ميں 'ميلہ' کو' پنجند' کا نام دے ديا گيا جو آج تک مرحوم کی پہچان ہے۔

دلدار پرويز بھٹی نے کتابیں بھی تحرير کيں جن ميں 'دلدارياں'، 'آمنا سامنا' اور 'دلبر دلبر' نماياں ہيں۔ تيس اکتوبر انيس سو چورانوے کو نيويارک ميں فنڈ ريزنگ شوز ميں مسلسل کام کرنے کے باعث برين ہيمرج کے حملے سے وہ جانبر نہ ہوسکے اور مداحوں کو اداس چھوڑ کر دنیائے فانی سے کوچ کرگئے۔ سماء

کرنے

کی

کے

پر

waqar

africa

christians

Tabool ads will show in this div