غربت ختم کرنے کی خواہشمند فلپائنی حسینہ ’’مس یونیورس‘‘بن گئیں

تھائي لينڈ ميں ہونے والے مس يونيورس مقابلہ فلپائن کي دوشيزہ نے جيت ليا۔ اس مقابلے کی 66 سالہ تاریخ میں پہلی بار ایک خواجہ سرا انجیلا پونس نے بھی حصہ لیا۔

تھائی لینڈ کے دارالحکومت بینکاک میں ہونے والا مس يونيورس 2018 کا مقابلہ سجا تو حسن اور ذہانت کے امتحان ميں فلپائني حسينہ سب پر بازي لے گئي ۔

آسٹريليا ميں پيدا ہونے والي چوبيس سالہ کيٹريانا گرے کو سياحت کا شوق ہے اور وہ دنیا بھر سے غربت کا خاتمہ چاہتی ہیں۔

دنيا بھر سے 93 ممالک کی خوبصورت اميدواروں نے ايونٹ ميں حصہ ليا تھا۔ اس بار یہ اپنی نوعیت کا ایک منفرد مقابلہ رہا کیونکہ پہلی مرتبہ ایک اسپین سے تعلق رکھنے والے ایک خواجہ سرا انجیلا پونس نے بھی حصہ لیا تھا لیکن بدقسمتی سے وہ پہلے 20 امیدواروں میں جگہ نہ بنا سکیں۔

انجیلا پونس اسپین کی ملکہ حسن 2018 منتخب ہوچکی ہیں۔

بھارت سے حصہ لینے والی امیدوار نیہال پہلے 20 امیدواروں میں جگہ بنانے میں بھی کامیاب نہ ہوسکیں جبکہ تھائی لینڈ کی حسینہ ٹاپ 10 میں رہیں۔

Miss Universe 2018

Catriona Gray

Tabool ads will show in this div