پاکستان میں آئندہ سال معاشی نمو 4.3 فیصد رہے گی، موڈیز

معیشتوں کی درجہ بندی کرنے والے ادارے موڈیز نے پاکستاني معيشت پر اپني رائے دی ہے کہ پاکستان میں آئندہ دو سالوں 2019 اور 2020 میں معاشی نمو 4.3 اور 4.7 فیصد رہے گی۔


موڈیز کی حالیہ رپورٹ کے مطابق پاکستان کے قرض لینے کی صلاحیت کی ریٹنگ بی تھری منفی ہے جبکہ بیرونی قرضوں کی ادائیگی معمولی ہیں۔

پاکستان میں امن و امان اور بہتر پاور سپلائی نے ترقی کے مواقع بڑھائے جبکہ زرمبادلہ ذخائر کافی نہیں بلکہ مزید بڑھانا ہوں گے۔ پاکستان میں کاروباری اعتماد بڑھ رہا ہے۔

موڈیز رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سی پیک منصوبے معاشی ترقی کا حصہ بن رہے ہیں، سی پیک منصوبوں سے لمبے عرصے میں ترقی کی صلاحیت  بہتر ہوگی۔

موڈیز نے پاکستان کیلئے آئی ایم ایف سے قرضہ لینے کو مثبت قرار دیدیا

پاکستان معاشی نظام کی بہتری کیلئے آئی ایم ایف کی طرف جائیگا، موڈیز

حکومتی اقدامات سے متعلق رپورٹ میں کہا گیا کہ نئی حکومت کے اداروں کے ریفارم سے مذید بہتری آئے گی اور ریفارم پروگرام سنبھالنا کسی بھی حکومت کےلئے مشکل کام ہے۔

دوسری جانب فچ نے بھی رپورٹ دی ہے کہ پاکستان نے آئی ایم ایف مذاکرات کے سبب پانچویں مرتبہ روپے کی قدر گرائی ہے، پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان اختلاف وقتی ہے اور 2019 کی پہلی سہ ماہی تک آئی ایم ایف سے حتمی معاہدہ ہو جائے گا۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ روپے کی قدر میں قلیل مدتي عرصے میں استحکام دیکھا جائے گا جبکہ 2019 کے اختتام تک ڈالر 148 روپے کا ہوگا۔

IMF loan

Moody's report

cpec projects

Tabool ads will show in this div