عظیم سائنسدان آئن اسٹائن خدا اور مذہب کو کیا سمجھتے تھے؟

Dec 05, 2018

نیویارک میں معروف آکشن ہاوس میں عظیم سائنسدان آئن اسٹائن کا خظ نیلامی کیلئے پیش کردیا۔ جرمن زبان میں تحریر خط کروڑوں روپے میں نیلام ہوا۔

خبر رساں ادارے کی جانب سے جاری رپورٹس کے مطابق عظیم سائنسدان آئن اسٹائن کا خط 37 کروڑ روپے سے زائد میں نیلام کر دیا گیا۔ نیویارک میں نیلام ہونے والے خط میں آئن اسٹائن نے خدا اور دین سے متعلق اپنے خیالات کا اظہار کیا تھا۔

جرمن زبان میں تحریر کردہ خط آئن اسٹائن نے 1954 میں ایک فلسفی ایرک گٹکنڈ کو لکھا تھا جسے سائنس اور مذہب کی بحث میں ایک اہم مسودہ شمار کیا جاتا ہے۔ خط کے مطابق آئن اسٹائن کا خدا اور مذہب پر یقین رکھنا مشکل تھا۔

آئن اسٹائن نے اس تحریر میں دیگر ادیان سمیت یہودیت کے نظریات سے بھی کھل کر اختلاف اور ان پر عدم اعتماد کا اظہار کیا ہے۔ منتظمین نے خط کی ڈیڑھ لاکھ ڈالر تک میں نیلامی کا اندازہ لگایا تھا تاہم یہ تقریباً انتیس لاکھ ڈالر میں فروخت ہوا ۔

Albert Einstein

handwritten letter

Christie's auction

Tabool ads will show in this div