صدر مملکت کی مولانا سمیع الحق کی قبر پر حاضری، فاتحہ خوانی

صدر مملکت عارف علوی نے مولانا سمیع الحق شہید کی قبر پر حاضری دی اور فاتحہ خونی کی، مولانا حامد الحق سے ملاقات میں ان کے والد کی شہادت پر اظہار تعزیت کیا۔

صدر پاکستان عارف علوی نے دارالعلوم حقانیہ اکوڑہ خٹک کا دورہ کیا اور مولانا حامد الحق سے ان کے والد مولانا سمیع الحق کی شہادت پر تعزیت کی۔

صدر عارف علوی نے مولانا سمیع الحق کی قبر پر حاضری دی اور فاتحہ خوانی کی۔ اس موقع پر انہوں نے کہا کہ مولانا سمیع الحق نے جمہوریت کیلئے نمایاں خدمات انجام دیں، مولانا صاحب کے خاندان کے دستخط 73ء کے آئین میں بھی موجود ہیں۔

صدر مملکت کا کہنا ہے کہ حکومت کی ذمہ داری ہے کہ مولانا سمیع الحق کے قاتلوں کو گرفتار کرے، ان کے خاندان سے ہر ممکن تعاون جاری رکھیں گے، یقیناً مولانا سمیع الحق شہید کی موت پاکستان کیلئے بہت بڑا سانحہ ہے۔

مولانا حامد الحق حقانی نے ایک ماہ گزرنے کے باجود مولانا سمیع الحق کی شہادت سے متعلق کیس میں پیشرفت نہ ہونے کا شکوہ کیا، بولے کہ مولانا صاحب کو بھارت اور افغانستان میں موجود غیر ملکی ایجنٹ کے ذریعے سازش کے تحت قتل کروایا گیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ مولانا صاحب کو سیکیورٹی تھریٹس تھیں، حکومت سے اپیل ہے کہ مولانا سمیع الحق شہید کے قاتلوں کو جلد گرفتار کریں۔ صدر مملکت نے یقین دہانی کروائی کے وزیر اعظم عمران خان سے اس حوالے سے خصوصی طور پر بات کریں گے۔

AKORA KHATTAK

JUIS

Sami ul Haque

Hamid ul Haque

Tabool ads will show in this div