ایبٹ آباد کے 2 میڈیکل کالجز میں داخلے پرپابندی

سپریم کورٹ نے ایبٹ آباد کے دو میڈیکل کالجز میں داخلے پر پابندی لگا دی۔ جسٹس عظمت سعید نے ریمارکس دیے کہ دنیا میں پاکستانی میڈیکل کالجز کی ڈگریوں کی اہمیت کاغذ کے ٹکڑے سے زیادہ نہیں۔

نجی میڈیکل کالجزمیں داخلوں سے متعلق کیس کی سماعت سپریم کورٹ میں ہوئی۔عدالت نے مطلوبہ معیارپرپورا نہ اترنے کی وجہ سے فرنٹیئراورایبٹ آباد میڈیکل کالجزمیں داخلوں پر پابندی عائد کردی ۔

دوران جسٹس عظمت سعید نے ریمارکس دیے کہ آج کے بعد دونوں کالجز میں کوئی داخلہ نہیں ہوگا۔ پختونخواہ میں میڈیکل تعلیم کا حال سب سے برا ہے۔ان سے آبادی ویسے تو کنٹرول ہوتی نہیں، بندے مارنے کیلئے اس طرح کے ڈاکٹرز بنائے جاتے ہیں۔ پاکستانی میڈیکل کالجز کی ڈگریوں کی اہمیت بیرون ملک کاغز کے ٹکڑے سے زیادہ نہیں۔

میڈیکل کالج کی جانب سے وکیل نے کہا کہ پشاور ہائیکورٹ میں دخواست زیر التوا ہے جس پر جج نے ریمارکس دیے کہ درخواست کا فیصلہ آنے کے بعد کیس کی سماعت کی جائے گی ۔

Abbotabad

Tabool ads will show in this div