سوات: کھلونا سمجھ کر اٹھایا گیا دستی بم پھٹنے سے بچہ جاں بحق

بچے کی لاش کو خوازہ خیلہ سول اسپتال منتقل کردیا ہے

سوات کے علاقہ خوازہ خیلہ کی پہاڑی میں پرانا دستی بم پھٹنے سے بچہ جاں بحق ہوگیا۔

سوات سے سماء کے نمائندہ شہاب الدین کے مطابق بچے کی عمر 10 سال ہے اور اس کی شناخت رحمان کے نام سے ہوئی ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ بچہ گھر سے باہر کھیلنے گیا۔ اس کو ایک پرانا دستی بم زمین پر پڑا ہوا ملا۔ بچے نے کھلونا سمجھ کر اٹھایا اور اس کے ساتھ کھیلنے میں مصروف ہوگیا۔

اس دوران بم بچے کے ہاتھ میں ہی پھٹ گیا جس میں 10 سالہ رحمان موقع پر دم توڑ گیا۔

پولیس نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر بچے کی لاش کو خوازہ خیلہ سول اسپتال منتقل کردیا ہے۔

سوات میں عسکریت پسندی کے خلاف پاک فوج کے آپریشن کے دوران طالبان  نے پہاڑوں پر مورچے سنبھالے تھے۔

حال ہی میں پاک فوج نے سوات کو مکمل کلیئر قرار دے کر انتظامی امور سول انتظامیہ کے حوالے کردیے۔

گزشتہ ماہ نوشہرہ کے علاقہ اضاخیل میں دو جوان بھائیوں کو کھیتوں میں کام کرتے ہوئے ایک راکٹ ملا۔ وہ اس کو ناکارہ سمجھ کر اٹھاکر گھر لائے اور کھولنے کے دوران گھر کے اندر دھماکہ ہوا جس میں ایک بھائی جاں بحق اور دوسرا شدید زخمی ہوا۔

CHILD

Tabool ads will show in this div