دوستوں نے مدد نہ کی تو آئی ایم ایف کے پاس جانا پڑے گا،شیخ رشید

Oct 22, 2018

وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد کا کہنا ہے کہ کرپشن اور لوٹ مار کے ذریعے ملک کومعاشی بحران میں دھکیلنے والے چوروں کی یونائیٹڈیونین بنانا چاہتے ہیں ۔خواجہ سعد رفیق اور شاہد خاقان عباسی وکٹ کے دونوں جانب کھیل رہے ہیں۔ نواز شریف سے متعلق رائے بدل گئی ہے اب شہباز شریف کو نواز شریف سے زیادہ معاشی مجرم تصور کرتا ہوں۔

 

کوئٹہ پہنچنے پر ایئر پورٹ پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ ملک میں چور مچائے شور کی فلم لگائی ہوئی ہے اور شور وہ لوگ کررہے ہیں جنہوں نے ملک کی معیشت کو تباہ کردیا ہے ۔ بائیس کروڑ کے انجن بیالیس کروڑ میں لئے گئے ۔ بعض چور وکٹ کے دونوں جانب کھیل رہے ہیں اور چوروں کی یونائیٹڈ یونین بنارہے ہیں ۔ وکٹ کے دونوں جانب کھیلنے والوں میں خواجہ سعد رفیق اور شاہد خاقان عباسی ہیں ۔

 

کرپٹ سیاستدانوں نے ملک کو تباہ کردیا اور اس نہج پر پہنچادیا ہے کہ قرضے کی قسط واپس کرنا مشکل ہوگیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ فالودہ والے کے اکاﺅنٹ سے دو ارب روپے نکل رہے ہیں، یہ پیسہ چند سیاستدانوں کے اکاﺅنٹ میں منتقل ہوا ہے ۔ جس طرح چین نے چار سو چالیس چوروں کو گولی ماری ہے۔ پاکستان میں بھی قانون کو اتنا آسان اور تیز ہونا چاہیے کہ لوٹ مار اور منی لانڈرنگ کرنے والوں کو قرار واقعی سزا ملے۔

 

 انہوں نے کہا کہ عمران خان کا مشن ملک کو چوروں سے نجات دلانا ہے۔ ہم عمران خان کی قیادت میں اس ملک کے مسائل حل کریں گے۔ ابھی کڑا اور امتحان کا وقت ہے۔ مہنگائی ہوگی لوگوں کی سہولت دینے میں وقت لگے گا۔ عمران خان ملک میں ایسا نظام لارہے ہیں کہ چور اور ڈاکو،دیانتدار اور کرپٹ اور قاتل و مقتول میں فرق معلوم ہو۔شیخ رشید احمد نے کہا کہ نواز شریف اور آصف زرداری نے موجودہ حکومت کیلئے جہیز میں قرضوں کی قسطوں کی ادائیگی کے سوا کچھ نہیں چھوڑا ۔ابھی تو ایک سو اٹھائیس اکاﺅنٹس کا پتہ چلا ہے ۔

 

مزید اکاﺅنٹس بھی سامنے آئیں گے اس لیے چور سیاستدان ملک سے فرار کا راستہ ڈھونڈ رہے ہیں۔پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن نے دس سالوں میں ملک کے ساتھ جو کیا اس سے بڑی ملک دشمنی کوئی نہیں ہوسکتی۔ ہمیں لنگڑی لولی اوراپاہج معیشت دی ہے ۔دوستوں نے ہماری مدد نہ کی تو لا محالہ آئی ایم ایف کے پاس جانا پڑے گا۔ملک سے لوٹی گئی رقم کی منتقلی کیلئے مرنے والوں ،خوانچہ فروشوں اور ریڑھی والوں جیسے غریبوں کے اکاﺅنٹس استعمال کئے گئے یہ سیاست دانوں کی کم ظرفی اور ذہنی پستی کی عکاس ہے ۔

 

انہوں نے کہاکہ حکومت میں آنے کے بعد میری رائے یکسر بدل گئی ہے اب میں نواز شریف سے زیادہ شہبازشریف کو موجودہ معاشی بحران کا ذمہ دار اور مجرم سمجھتاہوں ۔نندی پور پراجیکٹ بلیک لسٹ کمپنی کو دی گئی اور اربوں روپے کی لوٹ مار کی گئی۔ وفاقی وزیر ریلوے نے کہا کہ گوادر پورٹ کا دنیا میں کوئی مقابلہ نہیں تاہم بدقسمتی سے گزشتہ ستر سالوں سے اس بندر گاہ سے کوئی فائدہ نہیں اٹھایا گیا ۔

 

کوئٹہ سے گوادر تک ریلوے لائن فعال ہونے پر گوادر پورٹ مزید ترقی کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ ریلوے اراضی پر کچھی آبادیوں کو نہیں کرایا جائےگا۔ پاکستان ریلوے کو ایک سال میں خسارے سے نکالیں گے۔ ریلوے کی آمدن میں پچاس دنوں میں ایک ارب روپے کا اضافہ کردیا ہے۔ سالانہ آمدن میں دس ارب روپے تک اضافہ کرینگے۔ انہوں نے کہا کہ ایم ایل ون اور ایم ایل ٹو ریلوے اچھی قیمت پر چین کو دینگے۔

Tabool ads will show in this div