دکھ درداورپیاربانٹنےوالی خوبروسنگرنازیہ حسن کی برسی

اسٹاف رپورٹ


کراچی : دکھ درد اور پیار بانٹنے والی خوبصورت گلوکارہ نازیہ حسن کو ہم سے بچھڑے چودہ برس بیت گئے، لیکن ان کے گائے گیتوں کی یاد اب بھی دلوں میں زندہ ہے۔

پیار کی باتیں کرنے والی نازیہ حسن پر آج بھی سب کو ناز ہے، 3 اپریل 1965 کو کراچی میں آنکھ کھولی، پی ٹی وی کے پروگرام سنگ سنگ چلیں میں گلوکاری شروع کی۔ لندن سے باقاعدہ تربیت حاصل کی اور نوعمری میں ہی چھا گئیں اور پھر بات ایسے بنی کہ دنیا بھر میں ڈسکو دیوانے کی دھوم مچ گئی۔

ڈسکو دیوانے کے بعد بوم بوم، ینگ ترنگ، ہاٹ لائن اور کیمرہ کیمرہ کے نام سے ریلیز ہونے والے البمز نے انہیں شہرت کے بام عروج پر پہنچا دیا۔ لوگوں میں خوشیاں بانٹنے والی نازیہ حسن کی اپنی زندگی تلخیوں کا شکار رہی۔ ناکام شادی اور کینسر نے زیادہ جینے کی مہلت نہیں دی، چھتیسویں برس میں تیرہ اگست کو اس جہاں سے رخصت ہو کرلندن کے مسلم قبرستان میں آسودہ خاک ہوئیں۔

نازیہ حسن کے پرستار اس سریلی آواز اور مسکراتے چہرے والی نازیہ سے پیار کی باتیں کرنے کے لیے آج بھی بے تاب ہیں۔ سماء

کی

africa

sister

Tabool ads will show in this div