Technology

ایک غلطی نے 2 ایف سولہ طیارے تباہ کردیئے

بیلجئم کے ایئر فورس بیس پر صفائی اور مرمت کے دوران مکینکوں کی غلطی سے گولیاں چل پڑیں، جس نے سامنے کھڑے ایک ایف 16 طیارے کو مکمل تباہ، جب کہ دوسرے کو شدید نقصان پہنچایا۔

ایک کروڑ 90 لاکھ ڈالر یعنی دو ارب 56 کروڑ 50 لاکھ روپوں کی لاگت والے دونوں ایف سولہ طیارے اس وقت حادثے کا شکار بنے جب وہ ہینگر میں موجود تھے، اسی دوران کنٹرول ٹاور کے قریب موجود 2 مکینک پرزوں کی صفائی اور مرمت کا کام کر رہے تھے کہ طیاروں میں نصب ہونے والی کینن گن اتفاقیہ طور پر چل پڑی اور رَن وے پر کھڑے ایک اور ایف سولہ طیارے کو جا لگی، جس میں 10 ہزار لیٹر ایندھن بھرا ہوا تھا۔

[iframe width="640" height="360" frameborder="0" scrolling="no" marginheight="0" marginwidth="0" src=" https://www.youtube.com/embed/kt7IfqM96VU"]

گولیاں لگنے سے طیارے میں شدید آگ بھڑک اٹھی، جس نے دیکھتے ہی دیکھتے طیارے کو اپنی لپیٹ میں لے لیا، آگ کی وجہ سے ساتھ کھڑے دوسرے طیارے کو بھی جزوی نقصان پہنچا۔ واقعہ بیلجئم کے فلورینیس ایر فورس بیس پر پیش آیا۔

[iframe width="640" height="360" frameborder="0" scrolling="no" marginheight="0" marginwidth="0" src=" https://www.youtube.com/embed/GvFUWGfS2ZQ"]

بیس کمانڈر کے مطابق گولیاں چلنے کی آواز اتنی تیز تھی کہ دونوں مکینکس کی سماعت متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔ یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ جنگی طیارہ ایف 16 ایم 6 ون ولکین کینن سے لیس ہوتا ہے، جس کے ذریعے وہ فضا سے زمین اور فضا سے فضا میں اپنے ہدف کو نشانہ بناتا ہے۔

دو سو پچاس پاونڈ کی اس کینن گن کی گولائی میں 6، جب کہ درمیان میں ایک سوراخ ہوتا ہے، جس سے ایک منٹ میں 6000 راونڈ فائر کیا جاتا ہے۔ یہ کینن گن صرف ایف 16 ہی نہیں دیگر طیاروں ایف 22 ریپٹر، سپر ہورنٹ جیسے طیاروں میں بھی نصب ہوتی ہے۔

M61 Vulcan Cannon Gun

Gatling Gun

Tabool ads will show in this div