فواد چوہدری اور مشاہد اللہ میں دوبارہ تلخ کلامی

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2018/10/Senate-Phadda-10-10.mp4"][/video]

ملک کی دو بڑی سیاسی جماعتوں سے تعلق رکھنے والے افراد سینیٹ میں ایک بار پھر الجھ پڑے جس سے ایوان بالا کا اجلاس پھر سے شور شرابے کی نظر ہوگیا۔

سینیٹ اجلاس میں آج (بدھ کو) پھر وزیر اطلاعات فواد چوہدری اور لیگی رہنماء مشاہد اللہ خان کے درمیان سخت تلخ کلامی ہوگئی۔

گرما گرمی کے اس ماحول میں اپوزیشن ارکان نشستوں سے کھڑے ہوگئے۔ وزیر اطلاعات نے کہا کہ مشاہد اللہ نے سارا خاندان پی آئی اے میں بھرتی کر دیا ہے۔

فواد چوہدری نے کہا مشاہد اللہ کے خلاف ایف آئی اے تحقیقات کر رہی ہے، اس لیے اِن کو اصولاً ایوان میں بیٹھنا ہی نہیں چاہئے، پہلے خود کو الزامات سے بری کروائیں۔

اسپیکر نے وزیر اطلاعات سے اخلاقاً معذرت کرنے کا کہا تو فواد چوہدری نے جواب دیا کہ وہ کس بات کی معذرت کریں۔ انہوں نے کہا ن لیگی رہنماء کے 4 بھائی اور سالا بھی پی آئی اے میں ملازم ہیں۔

لیگی رہنماء نے جب مائیک سنبھالا اور جواب دینا شروع کیا تو اسپیکر نے انہیں غیرمناسب زبان استعمال نہ کرنے کی ہدایت کی۔

Mushahidullah

Senate Session

Tabool ads will show in this div