سنگین غداری کیس،مشرف بیان ریکارڈ نہیں کرانا چاہتےتو تحریری اعتراض داخل کریں

اسلام آباد کی خصوصی عدالت نے سابق صدر کے وکیل کو مؤکل سے ہدایات کے لیے پیر تک مہلت دے دی ہے کہ اگر پرویز مشرف سنگین غداری کیس میں اپنا بیان ریکارڈ نہیں کرانا چاہتے تو تحریری اعتراض داخل کریں۔

اسلام آباد کی خصوصی عدالت میں پرویز مشرف غداری کیس کی سماعت ہوئی۔ پراسیکیوٹر نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ پرویز مشرف قانون کا مفرور ہے۔ جسٹس یاور علی نے ریمارکس دیے کہ  کیس کو قانونی نکتہِ نظر کی روشنی میں چلانا ہے۔ ویڈیو لنک پر بیان ہوسکتا ہے یا ملزم کی حاضری ضروری ہے۔

ملزم کے وکیل نے عدالت سے دو سے تین ہفتوں کی مہلت کی استدعا کی تاہم عدالت نے تین ہفتوں کا وقت دینے سے انکار کردیا اور وکیل کو مشرف سے ہدایات لینے کے لیے پیر تک کا وقت دے دیا۔ کیس کی سماعت پیر تک ملتوی کر دی گئی ہے۔

TREASON CASE

pervez musharaf

Tabool ads will show in this div