کراچی میں منشیات بنانےکی لیبارٹری پکڑی گئی

Sep 12, 2018
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2018/09/Drugs-laboratory-khi-PKG-11-09-.mp4"][/video]

کراچی  ميں منشيات کی پہلی ليبارٹری  پکڑلی گئی ہے۔

تاريخ ميں پہلي بار بڑے شہر ميں بڑے کارنامے کا انکشاف ہوا ہے۔ منشيات ڈيلر نےکراچی میں اپني ليبارٹري قائم کی ہوئی تھی۔ ڈيفنس خيابان نشاط ميں منشيات ڈيلر شہزاد تھيبو نے ليبارٹري ميں تمام انتظام کررکھا تھا۔ اے وی سي سي نے چھاپا مارا توگروہ بے نقاب ہوگيا۔

شہزاد تھيبو جس نشے کي افزائش کررہا تھا،اسے گانجھا کہتے ہيں اور اس کے10گرام کي قيمت 3000ہزارروپے ہے۔

ماہرعلوم جرميات کے مطابق اس شخص نے فلم اور انٹرنيٹ پر ڈاکومينٹريز کے ذريعے منشيات بنانا سيکھي ہوگی۔

پوليس فرارہونيوالے ملزم کي تلاش ميں چھاپے ماررہي ہے۔ کراچي ميں يہ پہلي ليبارٹري ہے جو پکڑي گئی۔

Tabool ads will show in this div