پیسکو چیف نے گھر میں کنڈے ڈال رکھے ہیں، صوبائی وزیر کے چھاپے نے بھانڈہ پھوڑ دیا

اسٹاف رپورٹ


پشاور : خیبر پختونخوا میں بجلی چوری کے معاملے پر صوبائی اور وفاقی حکومت کے درمیان محاذ آرائی میں مزید  شدت آگئی ہے، صوبائی وزیراطلاعات نے چیف ایگزیکٹو پیسکو کے گھر پر چھاپہ مارکر اس پر بجلی چوری کا الزام عائد کردیا۔


دوسروں کو نصیحت خود میاں فصیحت، پشاور میں پیسکو چیف نے اپنے گھر میں کنڈے ڈال رکھے ہیں، صوبائی وزیر کے چھاپے نے بھانڈہ پھوڑ دیا۔


خیبر پختونخوا کے وزیر اطلاعات شاہ فرمان کو وفاقی وزیر مملکت پانی و بجلی عابد شیر علی کے الزامات ہضم نہ ہوسکے اور سارا غصہ پیسکو کے چیف ایگزیکٹو طارق سدوزئی پر اتارا۔


صوبائی وزیر اطلاعات نے ان کی غیر موجودگی میں ان کے گھر پر پولیس کے ہمراہ چھاپہ مارا اور الزام عائد کیا کہ چیف ایگزیکٹو ڈائریکٹ کنکشن لے کر بجلی چوری کررہا ہے۔


صوبائی حکومت کا مؤقف ہے کہ پولیس نے حقائق دیکھ کر روزنامچہ درج کرلیاہے، اب قانون کے مطابق چیف ایگزیکٹو پیسکو کیخلاف ایف آئی آر درج کرنے اور گرفتاری کا فیصلہ کیا جائے گا۔


دوسری جانب پیسکو ترجمان نے مؤقف اختیار کیا ہے کہ چیف ایگزیکٹو کو فری یونٹس ملتے ہیں انہیں بجلی چوری کی کوئی ضرورت نہیں۔


شہریوں کا کہنا ہے کہ مرکزی اور صوبائی حکومتیں توانائی بحران پر قابو پانے کی بجائے آپس میں لڑرہی ہیں، مگرعوام کو بجلی لوڈشیڈنگ سے نجات دلانے کی کوئی حکمت عملی موجود نہیں۔ سماء 

میں

کے

چیف

نے

دیا

وزیر

voting

Tabool ads will show in this div